Thursday , November 22 2018
Home / جرائم و حادثات / ٹپہ چبوترہ قتل کیس میں بیوی اور سسرالی رشتہ دار گرفتار

ٹپہ چبوترہ قتل کیس میں بیوی اور سسرالی رشتہ دار گرفتار

ملزمین کی تفتیش پر اعتراف جرم ، اے سی پی آصف نگر کا بیان
حیدرآباد ۔ /12 اپریل (سیاست نیوز) ٹپہ چبوترہ پولیس نے عادی سارق کے راجو کے قتل کا معمہ حل کرتے ہوئے اس کی بیوی اور دیگر سسرالی رشتہ داروں کو برآمد کرلیا ۔ اسسٹنٹ کمشنر آف پولیس آصف نگر کے اشوک چکرورتی نے بتایا کہ /9 اپریل کی شب کے راجیو عرف بھونگیر راجیو جو پیشہ سے عادی سارق ہے کی نعش مشتبہ حالت میں شاردا نگر گڈی ملکاپور میں دستیاب ہوئی تھی ۔ پولیس نے اس ضمن میں قتل کا مقدمہ درج کرتے ہوئے نعش کا پوسٹ مارٹم کروایا جس میں یہ معلوم ہوا کہ راجیو کا گلا گھونٹ کا قتل کیا گیا ہے ۔ پولیس نے شبہ کی بنیاد پر مقتول کے دوستوں اور پرانے ساتھیوں کو حراست میں لیکر تفتیش کی لیکن پولیس کو سراغ حاصل نہ ہونے پر اس کی بیوی کے سومالتا سے پوچھ تاچھ کرنے کا فیصلہ کیا ۔ مقتول کی بیوی کو حراست میں لے کر تفتیش کی گئی جس میں اس نے انکشاف کیا کہ اس کا شوہر کے راجیو عادی شرابی تھا اور آئے دن اسے گالی گلوج کیا کرتا تھا ۔ اس کے رویہ سے تنگ آکر سومالتا نے اپنی ماں کے وینکٹماں اور دو بھائیوں وی تروپتی اور بی انجنی کی مدد سے اس کا گلا گھونٹ کر قتل کردیا ۔ مسٹر چکرورتی نے بتایا کہ قتل سے قبل راجیو کی ساس نے مقتول کی آنکھوں میں مرچ پاؤڈر چھڑکا اور بیوی نے اس کے گلے پر ڈرلنگ مشین رکھ کر اس کا گلا گھونٹ دیا ۔ پولیس نے بتایا کہ قتل کے بعد مقتول کی بیوی نے ہی ٹپہ چبوترہ پولیس اسٹیشن میں یہ شکایت درج کروائی کہ اس کا شوہر راجیو اچانک لاپتہ ہوگیا ہے اور اس سلسلے میں کارروائی کرنے کی درخواست کی ۔ پولیس نے علاقے کے تمام سی سی ٹی وی کیمروں کا تجزیہ کیا جس میں مقتول کی بیوی ، ساس اور دو برادر نسبتی کی موجودگی کا پتہ لگایا اور تفتیش کے دوران مذکورہ افراد نے ارتکاب جرم کرنے کا انکشاف کیا ۔ پولیس نے گرفتار ملزمین کو عدالت میں پیش کرتے ہوئے انہیں جیل منتقل کردیا ۔

TOPPOPULARRECENT