Monday , November 20 2017
Home / کھیل کی خبریں / ٹیم انڈیا کیلئے رانچی میں 261 کا ٹارگٹ مقرر

ٹیم انڈیا کیلئے رانچی میں 261 کا ٹارگٹ مقرر

کیویز 96 رنز کی اوپننگ پارٹنرشپ کے بعد 260/7 تک محدود ۔ گپٹل نے 72 رنز بنائے

رانچی ، 26 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) اوپنر مارٹن گپٹل (72) کی جارحانہ بلے بازی سے بڑے اسکور کی جانب بڑھ رہی نیوزی لینڈ کی ٹیم کو ہندوستانی گیند بازوں نے شاندار واپسی کرتے ہوئے جے ایس سی اے انٹرنیشنل اسٹیڈیم میں آج چوتھے ونڈے میں 7 وکٹ پر 260رنز کے اسکور پر روک دیا۔  نیوزی لینڈ کے کپتان کین ولیمسن نے ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کا فیصلہ کیا۔ یہ فیصلہ اس وقت بہت صحیح نظر آ رہا تھا جب 36ویں اوور تک نیوزی لینڈ نے دو وکٹ پر 184رنز بنا لئے تھے۔ تب ایسا لگ رہا تھا کہ نیوزی لینڈ 300 سے زیادہ رنز بنا لے گی لیکن ولیمسن کے اسی اسکور پر آؤٹ ہونے کے بعد نیوزی لینڈ کی اننگز پر ہندوستانی گیند بازوں نے لگام لگا دی ۔ گپٹل نے 84 گیندوں پر 72 رنز میں 12 چوکے لگائے ۔ ان کے جوڑی دار ٹام لاتھم نے 40 گیندوں پر 39 رن میں چار چوکے لگائے جبکہ ولیمسن نے 59 گیندوں پر41 رن میں چار چوکے لگائے ۔ جارح بلے باز راس ٹیلر نے سست بلے بازی کرتے ہوئے 34 رنز کے لئے 58 گیندیں کھیلی اور صرف ایک چوکا لگایا۔  جیمز نیشم نے چھ، بی جے واٹلنگ نے 14، اینٹن ڈیوسچ نے 11،

میشل سینٹنر نے ناٹ آؤٹ 17 اور ٹم ساؤتھی نے ناٹ آؤٹ پانچ رنز بنائے ۔ ہندوستانی گیند بازوں نے 13 وائڈ سمیت ایکسٹرا 17 رنز دیئے ۔لیگ اسپنر امت مشرا 41 رنز پر دو وکٹ لے کر سب سے کامیاب رہے ۔ امیش یادو، دھول کلکرنی، ہاردک پانڈیا اور اکشر پٹیل کو ایک ایک وکٹ ملا۔گزشتہ تین میچوں میں چھ وکٹ لینے والے پارٹ ٹائم اسپنر کیدار جادھو نے آٹھ اوور میں محض 27 رنز دیئے لیکن اس بار ان کے حصے میں کوئی وکٹ نہیں آیا۔ ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کرنے اترے گپٹل اور لاتھم نے نیوزی لینڈ کو 15.3 اوور میں 96 رن جوڑ کر شاندار شروعات دی۔ لیفٹ آرم اسپنر پٹیل نے لاتھم کو اجنکیا رہانے کے ہاتھوں کیچ کراکر اس شراکت کو توڑا۔

اجمل کا اچھے پرفارمنس پر سلیکشن ممکن : انضمام الحق
کراچی ، 26 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کے چیف سلیکٹر انضمام الحق نے آف اسپنر سعید اجمل کو انٹرنیشنل کریئر میں نئی زندگی کی پیش کش میں زور دے کر کہا ہے کہ نیشنل سلیکٹرز نے انھیں مستقبل کے منصوبوں سے بالکلیہ خارج نہیں کردیا ہے۔ اجمل نے ڈومیسٹک کرکٹ میں اپنے اچھے مظاہروں کا صلہ دینے کی اپیل میں کہا ہے کہ انھیں ملک کی دوبارہ نمائندگی کا موقع دیا جائے۔ انضمام نے کہا: ’’سعید (اجمل) پاکستان کی طرف سے زبردست بولر رہے ہیں اور یہ حقیقت ہے کہ وہ نیشنل T20 چمپئن شپ میں اچھا کھیلے ہیں۔ ہم ڈومیسٹک فرسٹ کلاس میچز میں اُن کے مظاہروں کا مشاہدہ کررہے ہیں۔ اگر وہ اسی طرح اچھا کھیلتے رہیں تو سلیکشن کے لئے اُن کے نام پر غور کیا جاسکتا ہے۔‘‘ اجمل کبھی تمام تین فارمٹس میں پاکستان کے نمایاں طور پر کامیاب بولر ہوا کرتے تھے، یہاں تک کہ 2014ء میں آئی سی سی نے انھیں غیرقانونی بولنگ ایکشن کے سبب گیند بازی سے روک دیا۔ مگر وہ اپنے بولنگ ایکشن میں کچھ تبدیلی کے ساتھ مسابقتی کرکٹ میں واپس ہوگئے۔ گپٹل کو پیس بولر پانڈیا نے وکٹ کیپر ایم ایس دھونی کے ہاتھوں کیچ کرایا۔

TOPPOPULARRECENT