Thursday , December 14 2017
Home / شہر کی خبریں / ٹینک بنڈ کو تزئن نو کے ذریعہ پرکشش بنانے کی مساعی

ٹینک بنڈ کو تزئن نو کے ذریعہ پرکشش بنانے کی مساعی

فلک شگاف عمارتیں و دفاتر ، ایک عمارت سے دوسری عمارت آمد و رفت کی سہولت
حیدرآباد ۔ 9 ۔ اگست : ( سیاست نیوز ) : ٹینک بنڈ پر نیالک لانے کے لیے جی ایچ ایم سی کوشش کررہی ہے ۔ شہر حیدرآباد کی بین الاقوامی سطح پر شہرت کو مدنظر رکھتے ہوئے اس میں اور اضافہ کے لیے لوور ٹینک بنڈ میں ہائی لائز عمارتوں کی تعمیر کا منصوبہ تیار کررہی ہے ۔ ہوٹلس ، تفریح گاہ ، دفاتر ، تجارتی کامپلکس اور پارکنگ کی سہولیات پر مستقل عمارتیں تعمیر کرنے کے لیے ڈیزائن تیار کیا جارہا ہے ۔ حسین ساگر کے اطراف فلک بوس عمارتوں کی تعمیر کرنے کا حکومت نے پہلے ہی اعلان کردیا ہے ۔ اتنا ہی نہیں ٹینک بنڈ کے پاس خصوصی تفریح گاہ اور تجارتی ہب تیار کرنے کا حکومت نے ارادہ ظاہر کیا ہے ۔ اسی لیے تلگو تلی فلائی اوور کے نیچے واقع امبیڈکر مجسمہ سے لے کر سکندرآباد میں واقع سٹی لائٹ ہوٹل کے پاس موجود ریلوے برج تک کی سڑک کو 100 قدم توسیع دینے کا فیصلہ کیا ہے ۔ لوور ٹینک بینڈ میں فی الحال کچرا ٹرانسفر اسٹیشن چل رہے مقام سے دونوں جانب موجود خالی زمینات پر ہائی لائز عمارتیں کھڑی کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور ان عمارتوں پر سے ٹینک بینڈ پر آنے جانے کا راستہ بھی تعمیر کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور اس سڑک کو امبیڈکر مجسمہ کے پاس سے جاری ہونے والی 100 فیٹ سڑک سے جوڑا جائے گا اور ان تعمیرات کے لیے سرکاری و خانگی مشترکہ حصہ داری عمل میں لائی جائے گی ۔ اسی مناست سے پراجکٹ کی تیاری کے خدوخال کو ترتیب دینے میں عہدیداران منہمک ہوگئے ہیں اور ان عمارتوں کو ہمہ اقسام کے استعمال کے لیے تیار کیا جارہا ہے ۔ ٹینک بینڈ کی اونچائی تک پارکنگ کامپلکس اور اس سے اوپر کی منزلوں میں دفاتر اور تجارتی مالس کی تعمیر اور ان عمارتوں کے پاس سے ٹینک بنڈ کو جوڑنے والی سڑکیں بھی تعمیر کی جائیں گی حکومت کے تازہ احکامات کے مطابق لوور ٹینک بنڈ میں موجود ٹورسٹ ہوٹل ، اسنو ورلڈ عمارتوں کو چھوڑ کر ان کے اطراف موجود خالی زمینات پر ہائی لائز عمارتیں تعمیر کی جائیںگی ۔ ماضی قریب میں یہاں 15 منزلہ عمارت تعمیر کر کے بلدیہ کے دفاتر منتقل کرنے کا پلان تیار کیا گیا تھا ۔ مگر اس پر عمل آوری نہیں ہوئی ۔ ہائی لائز عمارتوں کی تعمیر مکمل ہونے کے بعد ممکن ہو تو بلدیہ کے دفاتر بھی انہی عمارتوں میں منتقل کر کے موجودہ بلدیہ کی عمارت کو دیگر مصروفیات کے استعمال میں لانے کے بارے میں بھی غور کیا جارہا ہے ۔ خانگی افراد اپنی زمینات کی ترقی کے لیے ڈیولپرس کے حوالہ کرنے کا عمل ٹرانسفر آف ڈیولپمنٹ رائٹس ( ٹی ڈی آر ) کو ممبئی اور دہلی جیسے شہروں میں زبردست مقبولیت حاصل ہے ۔ مگر حیدرآباد میں ٹی ڈی آر کے لیے حالات سازگار نہیں ہیں ۔ جس کی وجہ سے سرکاری پراجکٹوں کے لیے بھی حصول اراضی کی ضرورت پیش آرہی ہے ۔ فی الحال شہر میں سڑکوں کی توسیع اور سرکاری پراجکٹس کی تعمیر کے لیے حصول اراضی کے لیے بھاری بجٹ مختص کرنا پڑرہا ہے ۔ اس مناسبت سے خانگی حصہ دار کو بڑھاوا دینے کے ساتھ ساتھ ٹی ڈی آر کو بھی بڑھاوا دینے کا جی ایچ ایم سی عہدیداران نے فیصلہ کیا ہے ۔ ہائی لائز عمارتوں اور دیگر پراجکٹس کی تعمیراتی ذمہ داری ٹی ڈی آر رکھنے والے ڈیولپرس کو دینے کے بارے میں غور کیا جارہا ہے ۔ جس کی وجہ سے شہر میں تیز رفتاری سے سڑکوں کی توسیع کے علاوہ ہائی لائز عمارتوں کی تعمیر سے ڈیولپرس کو بھاری فائدہ ہونے کے امکانات پائے جاتے ہیں ۔
ٹینک بنڈ علاقے کو خصوصی سیاحتی و تجارتی مرکز میں تبدیل کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ قبل از وقت لوور ٹینک بنڈ روڈ کو سٹی لائٹ ہوٹل کے پاس ریلوے برج تک 100 فیٹ سڑک کی حیثیت سے توسیع دی جائے گی ۔ بعد ازاں لوور ٹینک بنڈ میں واقع خالی زمینات پر ہائی لائز عمارتیں تعمیر کی جائیں گی ۔ فی الحال جی ایچ ایم سی میں ڈی پی آر تشکیل دئیے جارہے ہیں ۔ بعد ازاں سرکاری اجازت لے کر ٹنڈرس طلب کیے جائیں گے اور جتنا جلد ہوسکے تعمیراتی کاموں کا آغاز کیا جائے گا ۔ ٹی ڈی آر کو اہمیت دی جائے گی ۔۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT