Wednesday , November 22 2017
Home / شہر کی خبریں / ٹی آر ایس ، انتخابات میں تمام طبقات کی تائید حاصل کرنے کوشاں

ٹی آر ایس ، انتخابات میں تمام طبقات کی تائید حاصل کرنے کوشاں

نئی ریاست تلنگانہ میں نئی اسکیمات کا وعدہ پورا کیا گیا ، کے ٹی راما راو کا خطاب
حیدرآباد۔/19جنوری، ( سیاست نیوز) تلنگانہ راشٹرا سمیتی نے گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن انتخابات میں تمام طبقات کی تائید حاصل کرنے کی مہم شروع کردی ہے۔ جس کے تحت وزیر انفارمیشن ٹکنالوجی کے ٹی راما راؤ نے آج نائی برہمن سماج کی جانب سے منعقدہ تقریب میں حصہ لیا اور تلنگانہ جدوجہد میں اس طبقہ کے اہم رول کی ستائش کی۔ انہوں نے کہا کہ نائی برہمن سماج نے تلنگانہ کے حصول میں اہم رول ادا کیا ہے اور تحریک کے دوران ان کی تائید غیر معمولی رہی۔ انہوں نے یقین دلایا کہ حکومت اس طبقہ کے مسائل کی یکسوئی کیلئے ہمیشہ تیار رہے گی۔ انہوں نے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت دراصل غریبوں کی حکومت ہے اور فلاح و بہبود اس کا اہم ایجنڈہ ہے۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ سابقہ حکمرانوں نے نہ صرف تلنگانہ کی مخالفت کی بلکہ نئی ریاست کے قیام کی صورت میں پسماندگی کے اندیشے ظاہر کئے لیکن ٹی آر ایس نے بہتر حکمرانی کے ذریعہ ان اندیشوں کو نہ صرف غلط ثابت کیا بلکہ ریاست کو ترقی کی راہ پر گامزن کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ تمام طبقات کی یکساں ترقی اور بھلائی کے حق میں ہیں اور کئی نئی اسکیمات کا آغاز کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ حیدرآباد میں مختلف ریاستوں سے تعلق رکھنے والے افراد بستے ہیں اور حکومت تمام طبقات کی بھلائی کی پابند ہے۔ انہوں نے کہا کہ کسی بھی علاقہ سے تعلق رکھنے والے شخص کو تلنگانہ میں اندیشوں کا شکار ہونے کی ضرورت نہیں۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ میں صنعتوں کے قیام اور سرمایہ کاری کو روکنے کیلئے باقاعدہ مہم چلائی گئی لیکن حکومت نے برقی بحران پر قابو پاتے ہوئے صنعتوں کے قیام کی راہ ہموار کی ہے۔ کے ٹی آر نے کہا کہ سرکاری ملازمین کیلئے وعدہ کے مطابق حکومت نے 43% فٹمنٹ کا اعلان کیا ہے۔ انہوں نے ہر مستحق غریب کو وظیفہ اور راشن کارڈ پر ہر شخص کو 6 کیلو چاول کی فراہمی کا تذکرہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ راشن کارڈ رکھنے والے ہر شخص کو کلیان لکشمی اسکیم سے استفادہ کی گنجائش رہے گی۔ انہوں نے گریٹر حیدرآباد کے انتخابات میں ٹی آر ایس کی تائید کی اپیل کی۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT