Thursday , November 23 2017
Home / شہر کی خبریں / ٹی آر ایس حکومت کی دیڑھ سالہ کارکردگی مایوس کن

ٹی آر ایس حکومت کی دیڑھ سالہ کارکردگی مایوس کن

شکست کو کامیابی میں بدلنے کی سازش ، سٹلرس کے ووٹس خارج ، ایم ششی دھر ریڈی
حیدرآباد ۔ 26 ۔ اکٹوبر : ( سیاست نیوز): کانگریس کے سابق رکن اسمبلی مسٹر ایم ششی دھر ریڈی نے کہا کہ اپنی شکست کو کامیابی میں تبدیل کرنے کے لیے ٹی آر ایس نے ایک منظم سازش کے تحت 35 فیصد سٹلرس 30 فیصد مسلم اور ہندی بولنے والے 10 فیصد شمالی ہند کے افراد کے نام گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کی فہرست رائے دہندگان سے خارج کردینے کا الزام عائد کیا ہے ۔ آج گاندھی بھون میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مسٹر ایم ششی دھر ریڈی نے کہا کہ ٹی آر ایس کی دیڑھ سالہ کارکردگی مایوس کن ہے ۔ انتخابات سے قبل مسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے جھوٹے وعدے کرتے ہوئے عوام کو ہتھیلی میں جنت دکھائی ۔ اقتدار حاصل کرنے کے بعد ایک وعدے کو بھی پورا کرنے میں ناکام ہوگئے ۔ گریٹر سکندرآباد کو سنگاپور اور پرانے شہر کو استنبول کی طرز پر ترقی دینے کا وعدہ کیا مگر کوئی کام نہیں کیا ۔ جس سے گریٹر حیدرآباد کے عوام میں ٹی آر ایس کے لیے ناراضگی پائی جاتی ہے ۔ اس کے علاوہ گریٹر حیدرآباد میں ٹی آر ایس کا کوئی وجود نہیں ہے ۔ گریٹر حیدرآباد کے مجوزہ انتخابات میں اپنی امکانی ناکامی کو کامیابی میں تبدیل کرنے کی چیف منسٹر مسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے سازش تیار کی ہے اور گریٹر حیدرآباد کی انتخابی فہرست سے سٹیلرس کے 35 فیصد اور مسلمانوں کے 30 فیصد کے علاوہ شمالی ہند سے تعلق رکھنے والے ہندی عوام کے 10 فیصد ووٹوں کو فہرست رائے دہندگان سے خارج کردیا گیا ہے ۔ اس کام میں چیف الکٹورل آفیسر بھنور لعل اور کمشنر جی ایچ ایم سی مسٹر سومیش کمار نے ٹی آر ایس حکومت سے مکمل تعاون کیا ہے ۔ کانگریس پارٹی نے بغیر نوٹس دئیے فہرست رائے دہندگان سے ووٹروں کے اخراج پر بھنور لعل سے ملاقات کی ۔ اور سنٹرل الیکشن کمیشن کو بھی اس کی شکایت کی ہے ۔ اگر خارج کردہ ووٹروں کو دوبارہ فہرست رائے دہندگان میں شامل نہیں کیا گیا تو کانگریس پارٹی عدلیہ سے بھی رجوع ہوگی ۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر حقیقی ووٹروں کو فہرست رائے دہندگان سے خارج کر کے 15 لاکھ بوگس نام فہرست رائے دہندگان میں شامل کرانے کی کوشش کررہے ہیں جس کی کانگریس پارٹی سخت مذمت کرتی ہے ۔ مسٹر ایم ششی دھر ریڈی نے کہا کہ ٹی آر ایس کے پاس عوام کے درمیان پہونچنے کے لیے کوئی ایجنڈا نہیں ہے اور نہ ہی ٹی آر ایس حکومت نے کوئی ترقیاتی اقدامات کئے ہیں ۔ جس کی بنیاد پر عوام سے ووٹ مانگا جاسکے اس لیے ووٹروں کو فہرست رائے دہندگان سے خارج کیا جارہا ہے ۔ باوجود اس کے ٹی آر ایس اپنے ناپاک عزائم میں کبھی کامیابی نہیں ہوگی اور نہ ہی کانگریس کبھی ٹی آر ایس کو کامیاب ہونے دے گی ۔۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT