ٹی آر ایس کو دئیے جانے والا ووٹ بی جے پی کو جائے گا

کانگریس کے حق میں ووٹ کے استعمال پر زور ، مشیر آباد امیدوار انیل یادو کا ریالی سے خطاب
حیدرآباد ۔ 5 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز ) : حلقہ اسمبلی مشیر آباد کے کانگریسی امیدوار انیل کمار یادو نے آج اپنے اسمبلی حلقہ میں ریالی منظم کی ۔ ٹی آر ایس کو دیا جانے والا ووٹ بی جے پی کے حق میں جانے کا دعویٰ کرتے ہوئے عوام کو اپنا ووٹ ضائع نہ کرنے اور انہیں بھاری اکثریت سے کامیاب بنانے کی اپیل کی ۔ انیل کمار یادو نے تلگو دیشم کے قائد ایم این سرینواس ، ٹی جے ایس کے قائد نرسیا ، سابق ڈپٹی مئیر راجکمار ، سابق کارپوریٹر ایس محمد واجد حسین ، کلپنا یادو کے علاوہ کانگریس کے قائدین رحیم الدین ، ڈاکٹر منہاج ، عبدالرشید ، محمد اکرم اور ہزاروں پارٹی کارکنوں کے ساتھ کٹا مسیماں اندرا پارک ، گاندھی نگر ، کواڑی گوڑہ ، مشیر آباد چوراستہ ، بھولکپور جامع مسجد ، باکارام ، رام نگر ، اڈیکمیٹ ، ودیا نگر ، اعظم آباد ، باغ لنگم پلی ، چکڑ پلی ، اروندتی نگر ، راجہ ڈیلکس تھیٹر ، اندرا نگر ، انجمن کامپلکس ، گلشن نگر وغیرہ ریالی منظم کرتے ہوئے عوام سے ووٹ طلب کیا ۔ بعد ازاں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے انیل کمار یادو نے کہا کہ ٹی آر ایس اور بی جے پی کی دوستی کسی سے ڈھکی چھپی نہیں ہے ۔ انتخابی میدان میں ٹی آر ایس امیدوار کی عدم موجودگی سے کیا تاثر ملتا ہے ۔ عوام جانتے ہیں ٹی آر ایس اور بی جے پی ایک ہی سکے کے دو رخ ہیں ۔ ٹی آر ایس کو دیا جانے والا ووٹ بی جے پی کو مستحکم کرے گا ۔

نریندر مودی کے وزیراعظم بننے کے بعد سارے ملک میں اقلیتوں اور دلتوں پر جو حملے کئے گئے ہیں کیا اس کو کوئی فراموش کرسکتے ہیں ۔ کارگذار چیف منسٹر کے سی آر نے مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات فراہم کرنے کا وعدہ کیا تھا ۔ کیا مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات ملے ہیں ۔ کانگریس نے مسلمانوں کو 5 فیصد تحفظات فراہم کرنے کا وعدہ کیا تھا مگر 4 فیصد تحفظات پر عمل کیا جارہا ہے ۔ اصل میں کے سی آر ، وزیر اعظم نریندر مودی کے ایجنٹ ہیں اور ٹی آر ایس بی جے پی کی بی ٹیم ہے ۔ اسمبلی حلقہ مشیر آباد سے 2014 کے عام انتخابات میں بی جے پی کے ریاستی صدر ڈاکٹر لکشمن نے کامیابی حاصل کی تھی جو بی جے پی کے امیدوار بن کر دوبارہ عوام کے سامنے آرہے ہیں ۔ انہیں ووٹ پوچھنے کا اخلاقی حق بھی نہیں ہے کیوں کہ انہوں نے کامیابی کے بعد کبھی مشیر آباد کے محلوں کا دورہ نہیں کیا ۔ عوام سے ملاقات کرتے ہوئے ان کے مسائل سے واقفیت حاصل نہیں کی ۔ انیل کمار یادو نے وعدہ کیا کہ وہ کامیابی کے بعد 24 گھنٹے عوام کو دستیاب رہیں گے ۔ مسائل کو حل کراتے ہوئے حلقہ اسمبلی مشیر آباد کو مثالی حلقہ میں تبدیل کریں گے ۔ وہ رائے دہندوں سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ فرقہ پرستی اور موقع پرستی کا خاتمہ کرنے کے لیے بی جے پی اور ٹی آر ایس کو شکست دیتے ہوئے انہیں بھاری اکثریت سے کامیاب بنائے وہ حلقہ کی ترقی بنیادی سہولتوں کی فراہمی کے لیے ہر ممکن کوشش کریں گے ۔۔

TOPPOPULARRECENT