Monday , June 25 2018
Home / اضلاع کی خبریں / ٹی آر ایس کے مضبوط قلعہ میں تلگودیشم فتحیاب

ٹی آر ایس کے مضبوط قلعہ میں تلگودیشم فتحیاب

مد ہول/14 مئی ( سیاست ڈسٹر کٹ نیوز )حلقہ اسمبلی مدہول میں کا نگریس پارٹی میں دو گروپ ہو نے کی وجہ سے پارٹی کو زبر دست نقصان سے دوچار ہو نا پڑا جس کی اصل وجہ ٹکٹ کی حصولیابی بتا یا جارہا ہے۔ واضح رہے کہ حلقہ اسمبلی مدہول میں مسٹر جی وٹھل ریڈی امیدوار رکن اسمبلی کا نگریس پارٹی مدہول ، مسٹر نارائن رائو پٹیل سابق رکن اسمبلی مد ہول ان دونوں کے گروپ کی وجہ سے مسٹر رام چندر ریڈی ضلع کانگریس صدر نے ایم پی ٹی سی اور زیڈ پی ٹی سی کی بی فارم دونوں گروپوںمیں تقسیم کر دئے جس کی وجہ سے وٹھل ریڈی گروپ میںشدید ناراضگی پیدا ہوگئی، جس کے باعث نارائن رائو پٹیل کے تین منڈل سے زیڈ پی ٹی سی امیدواروں کو ناکامی کا سامنا کر نا پڑا جب کہ جی وٹھل ریڈی کو تین منڈلس میں کا میا بی حا صل ہوئی واضح رہے کہ بھینسہ منڈل میں کا نگریس پارٹی زیڈ پی ٹی سی کا ٹکٹ نارائن رائو پٹیل گروپ میں دیا گیا تھا با وجو د جی وٹھل ریڈی کے آزاد تائیدی امیدوار زیڈ پی ٹی سی کیلئے کا میا بی حا صل کی۔ اس طرح بھینسہ میں بی نا رائن رائو پٹیل گروپ کے 6 کا نگریس پارٹی کے ایم پی ٹی سی کے مقابل جی وٹھل ریڈی کے آزاد تائیدی امیدوار کامیاب ہو ئے اس طرح مسٹر جی وٹھل ریڈی کے آبائی وطن دے گائوں میں کا نگر یس پارٹی کاٹکٹ نارائن رائو پٹیل کے حق میں جا نے کی وجہ سے یہاں بھی آزاد ایم پی ٹی سی امیدوار جی وٹھل ریڈی گروپ کا کامیا ب ہوا ۔

کا نگریس پارٹی کے تین زیڈ پی ٹی سیز اور 25 کا نگریس ایم پی ٹی سیز اور 10 آزاد وٹھل ریڈی تائید ی امیدواروں نے کامیابی حاصل کرتے ہوئے اول مقام پر کانگریس پارٹی رہی لیکن 25 ٹی آر ایس ایم پی ٹی سیز اور تین زیڈ پی ٹی سی امیدواروں کی کا میا بی کی اصل وجہ کا نگریس پارٹی کے دو گروپ اور کا نگریس پارٹی صدر رام چندر ریڈی ضلع عادل آباد کو اصل قصوار ما نا جارہا ہے کچھ لو گوں کا کہنا ہے کہ ہا ئی کمان نے مسٹر جی وٹھل ریڈی کو مکمل ٹکٹ دینے کا وعدہ کیا تھا اور رام چندر ریڈی کو ہدایت بھی دی تھیں۔ اس کے باوجود نارائن راؤ پٹیل رام چندر ریڈی کی ساز باز کا نتیجہ قراردیا اوروٹھل ریڈی گروپ میں ضلعی صد ر کے خلاف سخت براہمی دیکھی جارہی ہے چو نکہ وٹھل ریڈی کے تائیدی زیڈ پی ٹی سی بہت کم ووٹوں سے نا کام ہو ئے اس طرح مسٹر جی وٹھل ریڈی نے رکن اسمبلی مدہول کیلئے انتخاب میں حصہ لیا جب کہ بی نارائن راؤ پٹیل کے دو بھائی مو ہن پٹیل نے ٹی آر ایس کی تا ئید کی جب کہ راما رائو پٹیل نے بی جے پی کی تائید کی۔ اس طرح تین بھائی تین پارٹیوں میں منقسم دیکھے گئے ۔ایم پی ٹی سی اور زیڈ پی ٹی سی کے نتا ئج کے بعد یہ بات زیر گشت ہے کہ نارائن رائو پٹیل گروپ کانگریس پارٹی کے ایم پی ٹی سی ، ٹی آر ایس پارٹی کو تا ئید کر نے کی افواہیں گشت کررہی ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT