Sunday , November 18 2018
Home / اضلاع کی خبریں / ٹی آر ایس کے موقف پر دوبارہ سروے کی اطلاع

ٹی آر ایس کے موقف پر دوبارہ سروے کی اطلاع

کانگریس سے خوفزدہ کے سی آر کے ارادے پر گلابی امیدواروں میں تشویش

نظام آباد :7؍نومبر ( محمد جاوید علی )برسراقتدار ٹی آرایس پارٹی نے قبل از انتخابات کے ارادہ سے اسمبلی کو تحلیل کرتے ہوئے 105 امیدواروں کے ناموں کا اعلان کیا تھا اور گذشتہ دو ماہ سے ٹی آرایس کے امیدوار اپنے انتخابی مہم کو جاری رکھے ہوئے ہیں لیکن کانگریس پارٹی کی اہمیت میں دن بہ دن اضافہ کے باعث برسراقتدار جماعت خوف زدہ نظر آرہی ہے جس کی وجہ سے چیف منسٹر مسٹر چندر شیکھر رائو نے دوبارہ سروے کراتے ہوئے پارٹی کے موقف کے بارے میں رپورٹ حاصل کررہے ہیں ضرورت پڑنے پر امیدواروں کو تبدیل کرنے کا بھی ارادہ رکھتے ہیں جس کے باعث موجودہ امیدوارو ں میں تشویش پائی جارہی ہے اسمبلی کے تحلیل کے بعد متحدہ ضلع میں ٹی آرایس پارٹی نے بڑے پیمانے پر اپنی پارٹی کی مہم چلاتے ہوئے جلسوں کا انعقاد عمل میں لاتے ہوئے ٹی آرایس کے حق میں ووٹ دینے کی خواہش کررہے ہیں لیکن ریاست گیر سطح پر ٹی آرایس کے خلاف ظاہر ہونے والی ناراضگیوں سے برسراقتدار جماعت خوف زدہ نظر آرہی ہے متحدہ ضلع میں بھی مختلف مقامات پر ٹی آرایس کے خلاف ناراضگیاں ظاہر ہوئی ہے ۔ دو دن قبل جکل کے سابق رکن اسمبلی کے خلاف ناراضگی ظاہر کرتے ہوئے عوام نے شدید احتجاج کیا ہے ۔ جکل کے سابق رکن اسمبلی گذشتہ چند دنوں سے تنازعوں کا شکار ہے انہوں نے دھوبی طبقہ کے خلاف ایک من گھڑت کہانی سنائی تھی جس کے بعد دھوبی طبقہ نے کاماریڈی مستقر میں بڑے پیمانے پر احتجاج کیا تھا اس کے بعد ہنمنت شنڈے کو معذرت خواہی کرنی پڑی تھی ۔ ٹی آرایس کے امیدواروں کی سرگرمیاں اور حالات کے پیش نظر چیف منسٹر چندر شیکھر رائو دوبارہ سروے کرتے ہوئے جس کسی کے بھی خلاف رپورٹ حاصل ہونے کی صورت میں ان افراد کو بی فارم نہ دینے کا ارادہ رکھتے ہیں حالیہ چند دنوں سے ضلع میں خفیہ طور پر سروے کئے جانے کی بھی اطلاع ہے ۔اور متحدہ ضلع میں دو افراد کے خلاف رپورٹ حاصل ہونے کی بھی اطلاع ہے جس کی وجہ سے بھی امیدواروں میں تشویش پائی جارہی ہے ۔ چیف منسٹر مسٹر چندر شیکھر رائو کی جانب سے کئے گئے سروے انتہائی خفیہ طور پر کیا گیا ۔

TOPPOPULARRECENT