Friday , September 21 2018
Home / شہر کی خبریں / پارلیمنٹ بجٹ اجلاس میں اے پی تنظیم جدید قانون میں ترمیم متوقع

پارلیمنٹ بجٹ اجلاس میں اے پی تنظیم جدید قانون میں ترمیم متوقع

حیدرآباد۔15فبروری( پی ٹی آئی) مرکزی حکومت پارلیمنٹ کے آئندہ بجٹ سیشن کے دوران آندھراپردیش تنظیم جدیدایکٹ 2014ء میں ترمیمات کے موضوع کو اٹھائے گی ۔ مرکزی وزیر ایم وینکیا نائیڈو نے آج یہاں اس بات کا اشارہ دیا ۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت اے پی تنظیم جدید ایکٹ میں ترمیم کے متعلق دونوں ریاستیں تلنگانہ ‘ آندھراپردیش کے منتخبہ نمائندوں س

حیدرآباد۔15فبروری( پی ٹی آئی) مرکزی حکومت پارلیمنٹ کے آئندہ بجٹ سیشن کے دوران آندھراپردیش تنظیم جدیدایکٹ 2014ء میں ترمیمات کے موضوع کو اٹھائے گی ۔ مرکزی وزیر ایم وینکیا نائیڈو نے آج یہاں اس بات کا اشارہ دیا ۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت اے پی تنظیم جدید ایکٹ میں ترمیم کے متعلق دونوں ریاستیں تلنگانہ ‘ آندھراپردیش کے منتخبہ نمائندوں سے بات کرنے جارہی ہے جیسا کہ قانون ساز اسمبلی کی نشستوں اور ملازمین کی تقسیم پر بات چیت کی جاچکی ہے ۔ اس سوال پر کہ آنے والے پارلیمانی سیشن کے دوران ترمیمات کو پیش کیا جائے گا پر مرکزی وزیر پارلیمانی اُمور نے کہا کہ جس طرح سے دیگر موضوعات کو پیش کیا گیا ہے اسی طرح اس موضوع کو بھی پیش کیا جاسکتا ہے ۔ مرکزی وزیر وینکیا نائیڈو نے بتایا کہ پارلیمنٹ کے بجٹ سیشن میں نئے بلوں اور آرڈیننس پر مباحث ہوں گے جبکہ کن بلوں کو پارلیمنٹ میں متعارف کیا جائے گا مختلف وزارتوں کی جانب سے اس پر ایک اجلاس کل منعقد ہوگا اور ممکن ہے کہ اے پی تنظیم جدید قانون میں ترمیم کے بل کو بھی پیش کیا جائے گا ۔ ریاست آندھراپردیش اور ریاست تلنگانہ کے درمیان آبی تنازعہ کی دونوں ریاستوں کے وزرائے اعلیٰ چندرابابو نائیڈو اور کے چندر شیکھر راؤ کی جانب سے یکسوئی کومرکزی وزیر نے خوش آئند بتایا ۔ انہوں نے کہا کہ دونوں چیف منسٹرس کو چاہیئے کہ وہ اختلافات کو ختم کرتے ہوئے اپنی اپنی ریاستوں کی ترقی پر توجہ مرکوز کریں جبکہ مرکزی حکومت دونوں ریاستوں کو تمام تر امداد فراہم گی۔ مرکزی حکومت میں ٹی آر ایس کی شمولیت کے سوال پر مرکزی وزیر نے اس کی وضاحت کرتے ہوئے اس کو افواہ سے تعبیر کرتے ہوئے کہاکہ نہ ہی میرے ساتھ اور نہ وزیراعظم کے ساتھ ٹی آر ایس پارٹی کی اس سلسلہ میں کوئی بات چیت ہوئی ہے جبکہ ٹی آر ایس اور بی جے پی دونوں ہی مختلف سیاسی پارٹیاں ہیں ۔ آندھراپردیش کے لئے خصوصی زمرہ کے مطالبہ کے سوال پر وینکیا نائیڈو نے کہا کہ یہ موضوع مرکزی حکومت کے زیر غور ہے جبکہ چند موضوعات پر کام بھی کیا جاچکا ہے ۔ مرکزی وزیر ایم وینکیا نائیڈو آج یہاں این کے ایم گرانڈ ہوٹل میں مقامی بی جے پی قائد بنڈارودتاتریہ کے ہمراہ میڈیا نمائندوں سے خطاب کررہے تھے ۔ اس سوال پر کہ آیا مرکزی بی جے پی حکومت کی جانب سے ٹی آر ایس کو مرکز میں شمولیت کی دعوت دی جائے گی پر وینکیا نائیڈو نے ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ یہ اسطرح کا وقت نہیں ہے ۔ مرکزی وزیر نے یو پی اے حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ اے آئی سی سی قائد ڈگ وجئے سنگھ کو اس بات کا کوئی حق نہیں پہنچتاکہ وہ اے پی تقسیم ایکٹ کی تیز رفتار عمل آوری کا مطالبہ کریں۔

TOPPOPULARRECENT