Tuesday , October 16 2018
Home / سیاسیات / پارلیمنٹ کا ساتواں دن کا اجلاس بھی ملتوی

پارلیمنٹ کا ساتواں دن کا اجلاس بھی ملتوی

اے پی کو خصوصی موقف ، بینکنگ اسکام پر اپوزیشن کی ہنگامہ آرائی
نئی دہلی۔ 13 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) کلیدی فینانس بل برائے سال 2018-19ء آج لوک سبھا میں پیش نہیں کیا جاسکا کیونکہ اپوزیشن ارکان کا لامتناہی شوروغل اور احتجاج ساتویں دن آج بھی پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں کو کام کرنے کا موقع نہیں دیا۔ لوک سبھا میں آج فینانس بل برائے 2018-19ء اور تصرف بل برائے 2017-18ء اور 2018-19ء پر آج بحث مقرر تھی لیکن حکمراں این ڈی اے کی حلیف تلگو دیشم اور اپوزیشن جماعتوں کے ارکان کو مختلف مسائل پر ہنگامہ آرائی کے سبب اجلاس کو دوپہر تک ملتوی کردیا گیا اور مقررہ مصروفیات کے ایجنڈہ کی پیشکشی کے باوجود ہنگامہ آرائی جاری رہنے کے سبب ایوان کی کارروائی دن بھر کیلئے ملتوی کردی گئی۔ راجیہ سبھا میں آندھرا پردیش کو خصوصی موقف، کاویری آبی تنازعہ، بینک اسکام اور دیگر مسائل پر انا ڈی ایم کے، تلگو دیشم اور اپوزیشن جماعتوں کے ارکان کی ہنگامہ آرائی جاری رہی۔ پارلیمنٹ کے دونوں ایوان 5 مارچ کو اپنے دوسرے مرحلے کے آغاز کے ساتویں دن آج بھی کوئی مصروفیت انجام نہیں دے سکے۔ تلگو دیشم اور وائی ایس آر کانگریس نے آندھرا پردیش کو خصوصی موقف کا مطالبہ کیا۔ کانگریس اور ترنمول کانگریس نے 12,700 کروڑ روپئے کے پنجاب نیشنل بینک اسکام کو موضوع بنایا تھا۔

TOPPOPULARRECENT