Friday , September 21 2018
Home / شہر کی خبریں / پارٹی انحراف پر تلگودیشم پارٹی کو بات کرنے کا اخلاقی حق نہیں

پارٹی انحراف پر تلگودیشم پارٹی کو بات کرنے کا اخلاقی حق نہیں

چندرا بابو کی آندھرا میں مصروفیت پر استفسار، وزیر آئی ٹی تلنگانہ کے ٹی آر کا بیان

چندرا بابو کی آندھرا میں مصروفیت پر استفسار، وزیر آئی ٹی تلنگانہ کے ٹی آر کا بیان
حیدرآباد ۔ 7 مارچ (سیاست نیوز) ریاستی وزیر پنچایت راج مسٹر کے ٹی آر نے کہا کہ پارٹی انحراف کے معاملے میں تلگودیشم پارٹی کو بات کرنے کا اخلاقی حق نہیں ہے۔ پڑوسی ریاست آندھراپردیش میں چندرا بابو نائیڈو کیا کررہے ہیں تلنگانہ تلگودیشم سے استفسار کیا۔ مسٹر کے ٹی آر نے تلگودیشم ارکان کے رویے کو ’’چور مچائے شور‘‘ کے مترادف قرار دیتے ہوئے کہا کہ پڑوسی ریاست آندھراپردیش میں چندرا بابو نائیڈو دوسری جماعتوں کے منتخب نمائندوں کو کیا اپنی جماعت میں شامل نہیں کررہے ہیں۔ اس معاملے میں تلگودیشم پارٹی کو بات کرنے کا کوئی اخلاقی حق نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی سے انحراف کرنے کا مسئلہ عدالت میں زیرالتواء ہے۔ اس معاملے میں قانون اپنا کام کرے گا۔ ریاستی وزیر پنچایت راج مسٹر کے ٹی آر نے کانگریس پر بھی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ کیا کانگریس کے دورحکومت میں ٹی آر ایس کے ارکان اسمبلی کو کانگریس میں شامل نہیں کیا گیا۔ ریاستی وزیر مسٹر جے کرشنا راؤ نے گورنر کے خطبہ کے دوران تلگودیشم ارکان کے رویہ کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہا کہ تلنگانہ کے فرزندوں نے جب زندگیاں قربان کی تھیں تب تلگودیشم کے ارکان تماشائی بنے رہے۔ علحدہ تلنگانہ ریاست کی تشکیل کے بعد اپنا حق جتانے کی کوشش کررہے ہیں۔ انہوں نے تلنگانہ کی ترقی میں رکاوٹ پیدا کرنے کا تلگودیشم پر الزام عائد کیا۔ آندھراپردیش میں وائی ایس آر کانگریس پارٹی اور کانگریس کے ارکان پارلیمنٹ، ارکان اسمبلی، ارکان قانون ساز کونسل کو تلگودیشم میں شامل کرنے کی وجہ طلب کی۔ پارلیمنٹری سکریٹری مسٹر سرینواس گوڑ نے اسمبلی میں گورنر کے خطبہ کے دوران کانگریس اور تلگودیشم ارکان کے احتجاج کو جمہوری اصولوں کے مغائر قرار دیتے ہوئے کہا کہ دونوں جماعتوں کے ارکان نے قومی ترانہ کا بھی احترام نہیں کیا۔ پارٹی سے انحراف کرنے کے معاملے میں دونوں جماعتوں کا احتجاج بے وقت کی راگنی ہے کیونکہ ٹی آر ایس کی تائید سے اقتدار حاصل کرنے والی کانگریس نے ٹی آر ایس کے 10 ارکان اسمبلی کو کانگریس میں شامل کرلیا تھا۔ پڑوسی ریاست آندھراپردیش میں وائی ایس آر کانگریس اور کانگریس کے منتخب ارکان کو تلگودیشم پارٹی میں شامل کیا جارہا ہے۔

TOPPOPULARRECENT