Wednesday , August 22 2018
Home / شہر کی خبریں / پارکنگ مافیا کے خلاف بلدیہ اور ٹریفک پولیس کی مہم بے اثر

پارکنگ مافیا کے خلاف بلدیہ اور ٹریفک پولیس کی مہم بے اثر

میٹرو اسٹیشنوں اور تجارتی کامپلکسوں میں من مانی پارکنگ فیس وصولی
حیدرآباد۔18ڈسمبر(سیاست نیوز) شہر میں محکمہ ٹریفک پولیس اور مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کی جانب سے چلائی گئی پارکنگ مافیا کے خلاف مہم بے اثر ثابت ہونے لگی ہے اور شہر کے بیشتر تجارتی علاقو ں میں پارکنگ مافیا کی جانب سے پارکنگ فیس کی وصولی کا سلسلہ ایک مرتبہ پھر سے شروع کیا جاچکا ہے لیکن جی ایچ ایم سی اور ٹریفک پولیس کی جانب سے اختیار کردہ نظرانداز کرنے کی پالیسی کے سبب پارکنگ مافیا کے حوصلے بلند ہونے لگے ہیں۔ شہر میں میٹرو ٹرین کی سہولت شروع ہونے کے بعد میٹرو اسٹیشن کے قریب من مانی پارکنگ فیس وصول کئے جانے کی شکایات کے علاوہ شہر کے تجارتی کامپلکسوں میں بھی غیر مجاز پارکنگ فیس کی وصولی کا سلسلہ جاری ہے اور کوئی اس پر روک لگانے والا نہیں ہے۔ شہریوں کی جانب سے غیر مجاز پارکنگ فیس کی ادائیگی کے متعلق کہا جار ہا ہے کہ کئی مقامات پر پارکنگ کی سہولت فراہم نہ کئے جانے کے سبب پارکنگ مافیا کی جانب سے من مانی کی جارہی ہے اور انہیں کوئی روکنے والا نہیں ہے۔ جو شہری غیر مجاز پارکنگ میں گاڑیاں پارک کرتے ہوئے فیس ادا کرنے پر مجبور ہیں ان کا کہنا ہے کہ 10یا20روپئے کے لئے وہ کسی سے الجھنا نہیں چاہتے اسی لئے یہ معلوم رکھتے ہوئے بھی کہ وصول کی جانے والی پارکنگ فیس غیر مجاز ہے وہ ادا کردیتے ہیں ۔ شہر کے کئی اہم و معروف تجارتی مقاما ت پر غیر مجاز پارکنگ فیس کی وصولی اور باضابطہ اس کے لئے ٹکٹ کی اجرائی سے اس بات کا اندازہ ہوتا ہے کہ پارکنگ مافیا شہر میں کس حد تک مستحکم ہے اورکس طرح سے پارکنگ فیس کے نام پر پورے شہر میں کروڑوں روپئے وصول کئے جاتے ہیں۔ مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کے عہدیداروں نے بتایا کہ شہر کے کسی بھی مقام پر خاص طور پر تجارتی مقامات پر پارکنگ فیس کی وصولی کی کسی کو بھی اجازت نہیں دی گئی ہے کیونکہ تجارتی کامپلکس میں موجود تاجرین کی ذمہ داری ہے کہ وہ اپنے گاہکوں کو پارکنگ کی سہولت فراہم کریں کیونکہ گاہکو ں کو پارکنگ کی سہولت کی فراہمی کی شرط پر ہی ان کے تجارتی لائسنس برقرار ہیں اور اگر گاہکوں کو مفت پارکنگ فراہم نہیں کی جاتی ہے تو ایسی صورت میں جی ایچ ایم سی کو اس بات کا اختیار حاصل ہے کہ وہ ان تجارتی اداروں کے لائسنس کی تنسیخ عمل میں لائے جو پارکنگ کی سہولت فراہم نہیں کرتے۔ سال گذشتہ عابڈز کے علاقہ میں موجود شہر کی سرکردہ موبائیل مارکٹ میں غیر مجاز پارکنگ فیس کی وصولی پر پولیس کی جانب سے پارکنگ فیس وصول کرنے والی اسوسی ایشن کے عہدیداروں کے خلاف فوجداری مقدمات درج کئے گئے تھے اور اس کے چند ماہ تک شہر کے کئی علاقو ںمیں مفت پارکنگ کی سہولت کی فراہمی کو یقینی بنایا جاتا رہا لیکن اب دوبارہ شہر میں باضابطہ خانگی پارکنگ ٹکٹ جاری کرتے ہوئے پارکنگ فیس وصول کی جانے لگی ہے اور اس مسئلہ پر متعلقہ محکمہ جات کی خاموشی کے سبب شہری لوٹ کا شکار بنتے جا رہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT