Wednesday , January 17 2018
Home / اضلاع کی خبریں / پانی کی قلت دور کرنے جنگی خطوط پر اقدامات کی ہدایات

پانی کی قلت دور کرنے جنگی خطوط پر اقدامات کی ہدایات

نظام آباد:8؍ اپریل(سیاست ڈسٹرکٹ نیوز)ضلع کلکٹر مسٹر رونالڈ روس نے آج پرگتی بھون میں پینے کے پانی کی سربراہی، مشن کاکتیہ، تلنگانہ ہریتا ہورم کی اسکیمات کی عمل آوری کا متعلقہ عہدیداروں سے تفصیلی جائزہ لیااور بنیادی طور پر جائزہ لیتے ہوئے اس کے حل کیلئے کئے جانے والے اقدامات کیلئے ضلع سطح کے عہدیداروں کو منڈل کے خصوصی عہدیداروں ک

نظام آباد:8؍ اپریل(سیاست ڈسٹرکٹ نیوز)ضلع کلکٹر مسٹر رونالڈ روس نے آج پرگتی بھون میں پینے کے پانی کی سربراہی، مشن کاکتیہ، تلنگانہ ہریتا ہورم کی اسکیمات کی عمل آوری کا متعلقہ عہدیداروں سے تفصیلی جائزہ لیااور بنیادی طور پر جائزہ لیتے ہوئے اس کے حل کیلئے کئے جانے والے اقدامات کیلئے ضلع سطح کے عہدیداروں کو منڈل کے خصوصی عہدیداروں کی حیثیت سے مختص کیا گیا۔ ضلع کلکٹر مسٹر رونالڈ روس نے موسم گرما میں پینے کے پانی کی قلت اور پیدا ہونے والی صورتحال پر عہدیداروں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ضلع کے بیشتر دیہی علاقوں میں واقع قبائیلی تانڈو میں آبی قلت پیدا ہورہی ہے اور کئی بورویلس خشک ہوچکے ہیں لہذا منڈل سطح کے عہدیداروں کے تعاون سے اس کا جائزہ لیں اور اس کے حل کیلئے جنگی خطوط پر اقدامات کریںاور بورویلس کی فلیشنگ،کھدوائی اور خانگی بورویلس کو کرایہ پر حاصل کرتے ہوئے ضرورت پڑنے پر پائپ لائن کی توسیع کرتے ہوئے پینے کا پانی فراہم کریں۔ اگر یہ کام نا ممکن ہونے کی صورت میں ٹینکروں کے ذریعہ پینے کا پانی سربراہ کریں۔ اس سال 17.50کروڑ روپئے آبی سہولتوں کی فراہمی کیلئے منظور کیا گیا ہے۔ فنڈس کی کوئی کمی نہیں ہے لہذا منڈل کیلئے مختص کردہ اسپیشل آفیسر منڈل عہدیداروں کے ساتھ مل کر بنیادی طورپر جائزہ لیں اورہر گھر کو پانی پہنچانے کیلئے متعلقہ عہدیداروں سے مل کر اقدامات کریں خاص طور سے تاڑوائی منڈل میں ٹینکروں کے ذریعہ پینے کا پانی سربراہ کیا جارہا ہے۔ باقی علاقہ میں بھی ٹینکروں کے ذریعہ پانی فراہم کرنے کیلئے منصوبہ بندی کرتے ہوئے اس کی رپورٹ پیش کریں ۔ پینے کے پانی کی فراہمی کیلئے کلکٹریٹ میں کال سنٹر کا قیام عمل میں لایا گیا ہے اس پر شکایت بھی کی جاسکتی ہے۔ کال سنٹر کو آنے والی شکایت کے بعدمتعلقہ اے ای کو اطلاع فراہم کرتے ہوئے اس مسئلہ کو حل کیلئے اقدامات کئے جائیں گے۔ برقی کی سربراہی میں کوئی مسئلہ نہیں ہے لہذا خانگی بورویلس کرایہ پر حاصل کرنے کیلئے اقدامات کریں اور بورویلس کی مرمت کیلئے کنٹراکٹرسے بھی بات چیت کریں۔ ضلع کلکٹر نے مشن کاکتیہ کا ذکر کرتے ہوئے ضلع سطح پر کلکٹریٹ کی نگرانی میں ایک کمیٹی قائم کی گئی ہے۔ چھوٹی آبپاشی کے سپرنٹنڈنٹ انجینئر اس کمیٹی کے کنونیر ہوں گے۔ جوائنٹ کلکٹر کے علاوہ 14 محکموں کے عہدیدار اس کمیٹی میں اراکین ہوں گے۔ ضلع میں 2351 تالابوں کی کشادگی کیلئے نشانہ مقرر کیا گیا ہے اب تک 701 تالابوں کی کشادگی کیلئے نشاندہی کرتے ہوئے 584 تالابوں کی منظوری عمل میں لائی گئی ہے۔ 304 تالابوں کے ٹنڈرس تکمیل کئے گئے ہیں اور 121 تالابوں کے کام شروع کئے گئے ہیں۔ مئی کے آخر تک ان کاموں کو تکمیل کرنے اور باقی تالابوں کے کاموں کے آغاز کیلئے اقدامات کرنے کی ہدایت دی۔ ہر منڈل میں 15 اتا20 تالاب ہے اور ہر عہدیدار کاموں کاجائزہ لیتے ہوئے اس کی تکمیل کیلئے اقدامات کریںاور ہر دن کتنے لاری مٹی کی نکاسی کی گئی ہے اور اس کی رپورٹ پیش کریں۔ ایم پی ڈی او، انجینئرنگ عہدیداروں کے تعاون سے مٹی کے نمونہ کا معائنہ کریں اور کھیتوں کے استعمال کیلئے ترغیب دیں۔ مشن کاکتیہ کے کاموں کی انجام دہی میں سرپنچوں کا تعاون ناگزیر ہے لہذا انہیں اس کاموں میں شامل کریں۔ ضلع کلکٹر نے ضلع میں تین سال کے دوران 10.5 کروڑ پودوں کی شجرکاری کا نشانہ مقرر کیا گیا ہے لہذا منڈل سطح کے عہدیدار اس سلسلہ میں اقدامات کرنے کی ہدایت دی۔ اس موقع پر ضلع جوائنٹ کلکٹر اے رویندرریڈی، اڈیشنل جوائنٹ کلکٹر راجہ رام، ڈی آر او منوہر، محکمہ جنگلات، آبپاشی، آرڈبلیو ایس کے عہدیدار بھی موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT