Tuesday , December 12 2017
Home / ہندوستان / پاکستانی دہشت گردوں کے داخلے کی اطلاع پر ملک بھر میں سخت چوکسی

پاکستانی دہشت گردوں کے داخلے کی اطلاع پر ملک بھر میں سخت چوکسی

تہواروں کے دوران تخریبی کارروائیوں کا خطرہ لاحق، اشرار پر نگرانی رکھنے کی ہدایت
نئی دہلی۔ 12اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) یہ خفیہ اطلاعات ملنے پر کہ 5 پاکستانی دہشت گرد ہندوستان میں گھس آئے ہیں مرکزی حکومت نے آج تمام ریاستوں کو سخت چوکسی اختیار کرنے کی ہدایت دی ہے تاکہ مجوزہ تہواروں کے موسم میں تخریبی عناصر کی جانب سے امن اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو دربرہم برہم کرنے کی کوششوں کو ناکام بنایا جاسکے۔ انٹلیجنس سے موصولہ اطلاعات پر وزارت داخلہ نے ملک گیر سطح پر چوکسی اختیار کرنے کا مشورہ دیا ہے اور تمام ریاستوں سے کہا ہے کہ عام مقامات، پرہجوم مارکٹس ریلوے اسٹیشنس، بس ٹرمنلس اور عبادتگاہوں پر اضافی پولیس فورس متعین کی جائے تاکہ دہشت گردوں کی جانب سے حملہ کی کسی بھی کوشش کو فی الفور ناکام بنایا جاسکے۔ وزارت داخلہ نے خصوصیت کے ساتھ بڑے شہروں دہلی، ممبئی، کولکتہ، چینائی، بنگلور اور حیدرآباد کی پولیس فورس سے کہا ہے کہ کل سے شروع ہونے والے تہواروں نوراتری، درگاپوجا، دسہرہ اور محرم کے دوران مزید چاق و چوبند ہوجائیں۔ علاوہ ازیں ریاستوں کو ہدایت دی گئی ہے کہ فیسٹول کے دوران اشتعال انگیز نعرہ بازی، بالخصوص مساجد اور درگاہوں کے قریب مورتیوں کی ایستادگی، متنازعہ مقامات پر تہوار منانے اور غیر روایتی راستوں سے جلوس نکالنے کی کوشش، عطیات کی زبردستی وصولی اور لڑکیوں سے چھیڑ چھاڑ کی حرکتوں سے فرقہ وارانہ کشیدگی کے لاحق خطرہ سے نمٹنے کے لئے سخت اقدامات کئے جائیں ۔ جبکہ حالیہ ہفتوں میں ذبیحہ گائو کے خلاف ہندو کارکنوں کی مہم میں شدت اور جانوروں کی منتقلی میں مداخلت اور بعض اوقات راستوں کو بطور احتجاج بند کردینے سے فرقہ وارانہ تشدد بھڑکنے کے واقعات پیش آچکے ہیں۔ برسر عام اور غیرروایتی مقامات پر مویشیوں کی قربانی اور فرقہ وارانہ واقعات کے محرک بن گئے۔ وزارت داخلہ نے خبردار کیا کہ ہر ہجوم پنڈال اور وسرجن جلوس تخریب کاروں کا یہ آسان نشانہ ہوسکتے ہیں۔ اور یہ مشورہ دیا گیا کہ درگا پوجا کے پنڈالوں، جلوس کے راستوں اور مقامات وسرجن پر سخت نگرانی رکھی جائے تاکہ فرقہ وارانہ واقعات اور دیگر امن و قانون کے مسائل کی روک تھام کو یقینی بنایا جاسکے۔

TOPPOPULARRECENT