Friday , September 21 2018
Home / Top Stories / پاکستانی نژاد مہرین فاروقی پہلی خاتون آسٹریلیائی سینیٹر

پاکستانی نژاد مہرین فاروقی پہلی خاتون آسٹریلیائی سینیٹر

ملبورن ۔ 20 اگست (سیاست ڈاٹ کام) پاکستانی نژاد خاتون مہرین فاروقی آسٹریلیا کی پارلیمنٹ میں بحیثیت سینیٹر پہلی مسلم خاتون حلف لیں گی۔ سڈنی مارننگ ہیرالڈ کے مطابق گرینس سینیٹر مہرین فاروقی کے حلف لینے سے صرف ایک ہفتہ قبل کراس بنچ سینیٹر فریزرایننگ نے آسٹریلیا میں مسلم تارکین وطن کی آمد پر روک لگانے کی بات کہی تھی اور کہا تھا کہ حکومت کو مائیگریشن پالیسی سے متعلق کوئی قطعی فیصلہ کرنا چاہئے۔ کینبرا میں اخباری نمائندوں سے بات کرتے ہوئے مہرین فاروقی نے کہا کہ وہ فی الحال ’’جوں کی توں‘‘ کیفیت میں تبدیلی کیلئے آئی ہیں۔ رپورٹ کے مطابق مہرین فاروقی نے فریزرایننگ کو چیلنج کیا کہ وہ جب چاہے ان سے (فاروقی) ملاقات کرسکتے ہیں اور بات چیت کا موضوع ہوگا ’’کثیرالمذاہب اور کثیر ثقافت والا خوبصورت آسٹریلیا‘‘۔ کیا یہ کسی ملک کی خوبی نہیں ہیکہ وہاں مختلف مذاہب، مختلف رنگ و نسل اور ذات پات کے لوگ آباد ہوں جہاں ہرایک کی تہذیب سے کچھ سیکھنے کا موقع ملتا ہے۔ مہرین فاروقی 1992ء میں پاکستان سے آسٹریلیا ہجرت کر گئی تھیں اور 2013ء سے نیو ساؤتھ ویلز کے ایوان بالا میں گرینس کی نمائندگی کرتی ہیں۔ انہوں نے وزیراعظم مالکم ٹرنبل حکومت کو ماحولیات کے معاملہ میں ایک ناکام حکومت قرار دیا۔

TOPPOPULARRECENT