پاکستان دہشت گردوں کا اڈہ بن گیا ہے:مختار عباس نقوی

نئی دہلی ۔ 8 ۔ اکتوبر (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس اور سماج وادی پارٹی نے آج نریندر مودی حکومت کی پاکستان کی جانب سے جنگ بندی کی خلاف ورزیوں کی بناء پر سخت مذمت کی جبکہ بی جے پی نے سخت موقف اختیار کرتے ہوئے کہا کہ ہندوستانی فوجیں ’’منہ توڑ‘‘ جواب دینے کے قابل ہیں اور یہ ملک ’’آتنکستان‘‘ (دہشت گردوں کا اڈہ) بن گیا ہے۔ بی جے پی قائد مختار

نئی دہلی ۔ 8 ۔ اکتوبر (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس اور سماج وادی پارٹی نے آج نریندر مودی حکومت کی پاکستان کی جانب سے جنگ بندی کی خلاف ورزیوں کی بناء پر سخت مذمت کی جبکہ بی جے پی نے سخت موقف اختیار کرتے ہوئے کہا کہ ہندوستانی فوجیں ’’منہ توڑ‘‘ جواب دینے کے قابل ہیں اور یہ ملک ’’آتنکستان‘‘ (دہشت گردوں کا اڈہ) بن گیا ہے۔ بی جے پی قائد مختار عباس نقوی نے کہا کہ پاکستان اب وہی پاکستان نہیں ہے، یہ اب ’’شیطانستان‘‘ اور ’’آتنکستان‘‘ بن گیا ہے۔ ہماری فوجیں جانتی ہیں کہ ایسے شیطانستان اور آتنکستان سے کیسے نپٹا جائے اور اسے منہ توڑ جواب کیسے دیا جائے۔ بی جے پی کے ترجمان نلن کوہلی نے بھی پاکستان کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ اس ملک میں فیصلہ کیا ہے کہ باقاعدہ رویہ سے انحراف کرے۔ وزیر دفاع ارون جیٹلی ملک سے کہہ چکے ہیں کہ ہماری مسلح افواج اور بی ایس ایف صورتحال سے نمٹنے اور منہ توڑ جواب دینے کی قابلیت رکھتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کے خلاف کوئی سخت موقف اختیار نہیں کیا گیا۔ حالانکہ ایسی خلاف ورزیوں کی صورت میں سابقہ حکومتوں کے دوران سخت موقف اختیار کیا گیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ اس بار انہیں یقین ہے کہ وہ اس بات کو محسوس کرلیں گے کہ ہماری مسلح افواج اور ہمارا ملک انہیں سخت پیغام دے رہا ہے تاکہ وہ موجودہ حرکت کا اعادہ کرنے سے باز آجائیں۔ مودی حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کانگریس کے ترجمان ابھیشک سنگھوی نے اظہار افسوس کیا کہ حکومت کا ردعمل ’’توقع کے مطابق‘‘ نہیں ہے۔ پاکستان ہمیں باقاعدہ طور پر چیلنج کر رہا ہے۔ ہماری عزت و وقار سے کھلواڑ کر رہا ہے۔ ہماری زندگیاں اور جائیدادیں تباہ کر رہا ہے لیکن ہم کچھ بھی کرنے سے قاصر ہیں۔ ہم صرف اعداد و شمار پیش کر رہے ہیں۔ معزز وزیراعظم جنہوں نے قوم پرستی کے بارے میں پورے جوش و جذبہ کے ساتھ تقریریں کی تھیں۔ ایک سطر کا بیان بھی دینے سے قاصر ہیں۔ انہوں نے قوم سے یہ نہیں کہا کہ کونسے ٹھوس اقدامات جنگ بندی کی خلاف ورزی کو روکنے کیلئے کئے جارہے ہیں۔ یہ انتہائی شرمناک بات ہے۔ سماج وادی پارٹی کے جنرل سکریٹری نریش اگروال نے بھی مودی اور بی جے پی پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ جنہیں ہم طاقتور سمجھتے تھے، وہ کمزور ثابت ہوئے ۔ جنہیں ہم نے مکمل اختیار دیا تھا، اس کا استعمال کرنے سے قاصر رہے۔ ہم منہ توڑ جواب دینے سے قاصر ہیں۔ حالانکہ چھوٹا سا ملک پاکستان ہندوستان کو دھمکیاں دے رہا ہے اور ہماری سر زمین پر مسلسل فائرنگ کر رہا ہے۔ اگروال نے کہا کہ ہم بزدلوں کی طرح رویہ اختیار کر رہے ہیں اور صرف جھوٹی دھمکیاں دے رہے ہیں۔ کسی کو بھی اس حکومت سے کوئی توقع نہیں ہے۔ حکومت نے پوری قوم کو مایوس کیا ہے۔ اگر ملک کے رہنما ملائم سنگھ یادو ہوتے تو پاکستان کو منہ توڑ جواب دیا گیا ہوتا۔ یہ ردعمل ایک ایسے وقت منظر عام پر آئے ہیں جبکہ پاکستانی فوج نے 50 صیانتی چوکیوں پر اور 36 دیہاتوں پر زبردست مارٹر شلباری اور فائرنگ جموں و کشمیر میں بین الاقوامی سرحد پر رات بھر کی جس میں ایک خاتون ہلاک اور دیگر 11 زخمی ہوگئے۔

TOPPOPULARRECENT