Wednesday , September 19 2018
Home / Top Stories / پاکستان میں عسکری اڈوں پر بمباری، 40 ہلاک

پاکستان میں عسکری اڈوں پر بمباری، 40 ہلاک

اسلام آباد / پشاور ۔ 21 ۔ جنوری (سیاست ڈاٹ کام) پاکستانی لڑاکا جیٹ طیاروں نے قانون سے عاری شمالی وزیرستان قبائلی خطے میں عسکری اڈوں کو نشانہ بنایا، جن میں طالبان کمانڈر عدنان رشید کا مکان شامل ہے، اور اس کارروائی میں جو سیکوریٹی فورسس پر سلسلہ وار مہلک حملوں کے جواب میں کی گئی، 40 دہشت گردوں کو ہلاک کردیا گیا۔ انٹری ذرائع نے آج کہا کہ ش

اسلام آباد / پشاور ۔ 21 ۔ جنوری (سیاست ڈاٹ کام) پاکستانی لڑاکا جیٹ طیاروں نے قانون سے عاری شمالی وزیرستان قبائلی خطے میں عسکری اڈوں کو نشانہ بنایا، جن میں طالبان کمانڈر عدنان رشید کا مکان شامل ہے، اور اس کارروائی میں جو سیکوریٹی فورسس پر سلسلہ وار مہلک حملوں کے جواب میں کی گئی، 40 دہشت گردوں کو ہلاک کردیا گیا۔ انٹری ذرائع نے آج کہا کہ شمالی وزیرستان میں جو طالبان اور القاعدہ عناصر کیلئے کلیدی پناہ گاہ ہے، کل رات کئے گئے فضائی حملوں میں 40 دہشت گرد مارے گئے۔ ان حملوں میں رشید کے مکان کو نشانہ بنایا گیا جو سابق ایرفورس ٹیکنیشن ہے جسے سابق ڈکٹیٹر پرویز مشرف پر 2003 ء میں قاتلانہ حملہ کی کوشش پر سزائے موت سنائی گئی ہے۔

اگرچہ بعض نیوز چیانلوں نے رشید کی اپنے بعض فیملی ممبرس کے ساتھ ہلاک کی اطلاع دی ہے لیکن ملٹری ذرائع نے کہا کہ اس کی تصدیق نہیں کی جاسکی۔ رشید اپریل 2012 ء میں شمال مغربی شہر بنو میں پاکستانی طالبان کی حکمت عملی سے جیل توڑنے کے دلیرانہ واقعہ کے دوران کئی خطرناک عسکریت پسندوں کے ساتھ فرار ہوگیا۔ایک ملٹری ذریعہ نے کہا کہ عسکریت پسندوں کی موجودگی کے تعلق سے مصدقہ انٹلیجنس رپورٹس کی اساس پر کل رات شمالی وزیرستان ایجنسی میں ان کے ٹھکانوں کو فضائی حملوں کا نشانہ بنایا گیا ۔ اس ذریعہ نے دعویٰ کیا ہے کہ مہلوکین میں پشاور میں ایک چرچ اور قصہ خوانی بازار پر حملوں سے مربوط دہشت گردوں کے ساتھ ساتھ وہ لوگ بھی شامل ہیں جنہوں نے اتوار کو بنو کنٹونمنٹ کے اندرون بم حملہ کیا تھا جس میں 26 فوجی ہلاک ہوگئے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ ان حملوں میں کئی عسکریت پسند زخمی بھی ہوئے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT