پاکستان میں محفوظ دہشت گرد ٹھکانے ناقابل قبول

اسلام آباد بدستور پناہ فراہم کررہا ہے ، ایس آئی اے ڈائرکٹر
واشنگٹن ۔ 8 جنوری ۔(سیاست ڈاٹ کام) سی آئی اے کے سربراہ مائیک پامپیسو نے کہا ہے کہ پاکستان بدستور دہشت گردوں کو محفوظ پناہ گاہیں فراہم کررہا ہے جو امریکہ کیلئے قابل قبول نہیں ہے۔ سی آئی اے کے ڈائرکٹر نے گزشتہ روز کہا کہ امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے پاکستان سے کہا تھاکہ دہشت گردوں کیلئے محفوظ ٹھکانوں کی فراہمی بند کرے جو امریکہ کیلئے خطرہ بن رہے ہیں ۔ افغانستان طالبان اور حقانی نٹورک کے خلاف کارروائی اور ان کے محفوظ ٹھکانوں کاصفایا کرنے میں پاکستان کی ناکامی پر امریکہ نے اس ملک کودی جانے والی 2 ارب ڈالر کی سکیورٹی امداد معطل کردیا تھا ۔ پاکستان کے لئے امریکہ کی سکیورٹی امداد بن کئے جانے سے قبل صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے سال نو کے موقع پر کئے گئے ٹوئیٹ میں الزامات عائد کیا تھاکہ پاکستان نے گزشتہ 15 سال کے دوران 33 ارب ڈالر کی امداد کا بدلہ امریکہ کو جھوٹ اور دھوکے کے سواء کچھ نہیں دیا۔ سی بی ایس نیوز نے سی آئی اے ڈائرکٹر پامپیسو کے حوالے سے کہاکہ ’’دہشت گردوں کی بدستور پاکستان میں محفوظ پناہ گاہیں اور محفوظ ٹھکانے فراہم کررہے ہیں جن سے امریکہ کو خطرات لاحق ہیں۔ انھوں نے مزید کہا کہ ’’پاکستانیوں کو ہم مطلع کرنے کی ممکن بہترین مساعی کررہے ہیں یہ اب مزید قابل قبول نہیں رہے گا ۔ چنانچہ یہ مشروط امداد کے طورپر ہم نے انھیں ایک موقع دیا تھا ۔ اگر وہ مسئلہ حل کرتے ہیں تو ہم ان کے ساتھ کام کرنے اور ان کے ساجھیداری جاری رکھنے میں خوشی محسوس کریں گے لیکن انھوں نے ایسا نہیں کیا ( اب ) ہم امریکہ بچانے جارہے ہیں ‘‘۔

TOPPOPULARRECENT