Wednesday , December 12 2018

پاکستان میں پولیو کیسیس میں اضافہ

سفری پابندیوں کیلئے عالمی ادارہ صحت کی سفارش

سفری پابندیوں کیلئے عالمی ادارہ صحت کی سفارش
جنیوا ۔ 5 مئی (سیاست ڈاٹ کام) عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے پاکستان میں پولیو کے کیسوں میں اضافے کے پیش نظر ملک سے باہر جانے والوں پر سخت سفری پابندیاں عاید کرنے کی سفارش کی ہے۔ ڈبلیو ایچ او نے سوموار کو جاری کردہ ایک بیان میں کہا ہے کہ ’’پولیو کا پھیلنا ایک عالمی صحت ایمرجنسی ہے اور دوسرے ممالک میں بھی یہ خطرناک بیماری پھیلنے کا اندیشہ ہے‘‘۔ادارے نے اس مرض کے خلاف جنگ کیلئے نئے رہنما اصول جاری کئے ہیں اور یہ سفارش کی ہے کہ پاکستان سے بیرون ملک سفر پر جانے والوں کو پولیو ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ پیش کرنا ہوگا۔خانہ جنگی کا شکار شام اور افریقی ملک کیمرون سے بیرون ملک جانے والوں پر بھی پابندیوں کی سفارش کی گئی ہے۔ان تینوں ممالک سے بیرون ملک جانے کے خواہاں شہریوں سے کہا گیا ہے کہ وہ پولیو سے بچاؤ اور اس کا وائرس ناکارہ کرنے والی ویکیسن استعمال کریں اور اس ضمن میں ویکسی نیشن کا بین الاقوامی سرٹیفیکیٹ پیش کریں۔شام اور کیمرون میں پہلے پولیو کے وائرس پر قابو پالیا گیا تھا لیکن اب دوبارہ وہاں پولیو کے نئے کیس سامنے آرہے ہیں۔پاکستان کے علاوہ نائیجیریا اور افغانستان ایسے ممالک ہیں جہاں پولیو کا وائرس وبائی شکل اختیار کرچکا ہے۔عالمی ادارہ صحت نے ان ممالک میں حالیہ مہینوں کے دوران پولیو کے نئے کیس سامنے آنے کے بعد بین الاقوامی سطح پر پبلک ہیلتھ ایمرجنسی نافذ کی ہے اور کہا ہے کہ اس مرض سے نمٹنے کے لئے عالمی سطح پرمربوط کوششوں کی ضرورت ہے۔

TOPPOPULARRECENT