Sunday , June 24 2018
Home / پاکستان میں گستاخ رسول ؐ برطانوی کو سزائے موت

پاکستان میں گستاخ رسول ؐ برطانوی کو سزائے موت

اسلام آباد ۔ 24 جنوری ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) پاکستانی نژاد 65 سالہ برطانوی شہری کو آج ملٹری ٹاؤن راولپنڈی کی ایک عدالت نے متنازعہ قانون ناموس رسالت کے تحت سزائے موت سنائی ۔ ایڈیشنل ڈسٹرکٹس اینڈ سیشن جج آر نوید اقبال نے محمد اصغر پر ایک ملین روپیہ کا جرمانہ بھی عائد کیا ، جسے پیغمبری کا دعویٰ کرتے ہوئے مکتوبات تحریر کرنے کی پاداش میں راولپ

اسلام آباد ۔ 24 جنوری ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) پاکستانی نژاد 65 سالہ برطانوی شہری کو آج ملٹری ٹاؤن راولپنڈی کی ایک عدالت نے متنازعہ قانون ناموس رسالت کے تحت سزائے موت سنائی ۔ ایڈیشنل ڈسٹرکٹس اینڈ سیشن جج آر نوید اقبال نے محمد اصغر پر ایک ملین روپیہ کا جرمانہ بھی عائد کیا ، جسے پیغمبری کا دعویٰ کرتے ہوئے مکتوبات تحریر کرنے کی پاداش میں راولپنڈی سے 2010 ء میں گرفتار کیا گیا تھا۔ اصغر نے یہ مکتوبات کئی اشخاص کو بھیجے جن میں ایک پولیس آفیسر ، پبلک پراسکیوٹر جاوید گل شامل ہیں۔ عدالت میں اس مکتوب کی ایک کاپی پیش کی گئی جو اصغر نے صادق آباد علاقہ میں پولیس اسٹیشن سربراہ کو تحریر کیا تھا ۔ اصغر کے خلاف سماعت کے دوران جو راولپنڈی کی ادیالہ جیل میں منعقد ہوئی ، 4 پولیس عہدیداروں نے حلفیہ بیان دیا۔ جج نے ڈیفنس کی ان دلیلوں کو مسترد کردیا کہ ملزم شخص دماغی صحت کے اعتبار سے مسائل کا شکار ہے ۔ پراسکیوٹرس نے کہا کہ اصغر نے جج کے روبرو بھی پیغمبر ہونے کا دعویٰ کیا تھا ۔ طبی جانچ پر پتہ چلا کہ اصغر نفسیاتی طورپر مستحکم صحت کا حامل ہے ۔

مشرف کی میڈیکل رپورٹ عدالت میں پیش
اسلام آباد ، 24 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) سابق صدر جنرل (ر) پرویز مشرف کی میڈیکل رپورٹ عدالت میں پیش کردی گئی ہے۔ یہ رپورٹ اے ایف آئی سی کے ڈاکٹروں کے پیانل نے تیار کی ہے۔ 18 جنوری کو جسٹس فیصل عرب کی سربراہی میں خصوصی عدالت نے ملزم مشرف کی صحت سے متعلق استغاثہ اور وکلائے صفائی کے متضاد دلائل کے بعد حکم دیا تھا کہ اے ایف آئی سی کے سینئر ڈاکٹرز پر مشتمل میڈیکل بورڈ تشکیل دیا جائے جس کی رپورٹ 24 جنوری کو پیش کی جائے۔ عدالت نے اپنے حکم میں ملزم کی صحت کے بارے میں 3 سوالات کے جواب مانگے تھے۔ پہلا یہ کہ ملزم کی حالت کتنی نازک ہے جس کے باعث وہ عدالت میں پیش نہیں ہو سکتے ؟ دوسرا یہ کہ کیا ملزم کی کوئی ہارٹ سرجری ہوئی یا اب تجویز کی گئی ہے ؟ تیسرا سوال یہ تھا کہ ملزم کو کتنے عرصہ تک اسپتال میں رہنے کی ہدایت کی گئی ہے۔ استغاثہ کے سربراہ اکرم شیخ نے دلائل میں مطالبہ کیا تھا کہ جب تک ملزم عدالت میں پیش نہیں ہوتا اس کے وکلا کو شنوائی کا حق نہ دیا جائے اور ملزم کی حراست کو باقاعدہ بنایا جائے۔ عدالت نے اس پر کہا تھا کہ اس حوالے سے فیصلہ میڈیکل رپورٹ کے جائزے کے بعد دیا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT