Sunday , November 19 2017
Home / کھیل کی خبریں / پاکستان میں 8 سال بعد آج بین الاقوامی مقابلہ

پاکستان میں 8 سال بعد آج بین الاقوامی مقابلہ

لاہور ۔ 11 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام ) جنوبی افریقی کپتان فاف ڈیوپلیسی کی قیادت میں آئی سی سی ورلڈ الیون کے کھلاڑی پاکستان ٹیم سے تین بین الاقوامی ٹوئنٹی20 میچوں پر مشتمل سیریز ’ آزادی کپ‘ کھیلنے کے لیے پاکستان پہنچ گئے۔پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے سربراہ نجم سیٹھی اور صوبائی وزیر کھیل جہانگیر خانزادہ نے لاہور کے علامہ اقبال انٹر نیشنل ایر پورٹ پر ورلڈ الیون ٹیم کا استقبال کیا جبکہ ان کے ہمراہ بورڈ کے اعلیٰ عہدیدار بھی موجود تھے۔ورلڈ الیون ٹیم کو انتہائی سخت سیکیورٹی میں ایرپورٹ سے ہوٹل پہنچایا گیا۔خیال رہے کہ لاہور کی لیبرٹی چوک پر 2009 میں سری لنکائی ٹیم پر حملے کے بعد پاکستان میں بین الاقوامی کرکٹ ٹیموں نے کھیلنے سے انکار کردیا تھا۔اس موقع پر ورلڈ الیون ٹیم کے کپتان فاف ڈیوپلیسی پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وہ پاکستان میں صرف کرکٹ کے لیے نہیں بلکہ اس سے بڑھ کر کچھ کرنے کے لیے کھیل رہے ہیں۔ ورلڈ الیون ٹیم کے کوچ اینڈی فلاور کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے فاف ڈیوپلیسی نے کہا کہ پاکستان آکر کھیلنا میرے لیے اعزاز کی بات ہے۔اس دوران ورلڈ الیون ٹیم کے کپتان فاف ڈیوپلیسی اورکوچ اینڈی فلاور نے ٹیم کی کِٹ کی رونمائی کی۔انہوں نے کہا کہ وہ خود کو خوش قسمت سمجھتے ہیں کہ وہ پاکستان میں کرکٹ کی بحالی میں اپنا کردار ادا کر رہے ہیں اور اس پر خوشی بھی محسوس کر رہے ہیں۔فاف ڈیوپلیسی نے کہا کہ پاکستان میں زبردست استقبال پر وہ پاکستانی عوام کے شکر گزار ہیں۔پاکستان سوپر لیگ (پی ایس ایل) میں اپنی شرکت کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ اگر وہ پی ایس ایل کے دوران دستیاب ہوئے تو ٹورنمنٹ ضرور کھیلیں گے۔اس موقع پر پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ورلڈ الیون کے کوچ اینڈی فلاور نے 2009 میں سری لنکائی ٹیم پر ہوئے دہشت گرد حملوں میں جاں بحق ہونے والے عہدیداروں کو خراجِ عقیدت پیش کیا۔ وہ اورورلڈ الیون کے تمام کھلاڑی پاکستان آکر خوشی محسوس کر رہے ہیں جبکہ تمام کھلاڑی یہاں سے اچھی یادیں لے کر جانا چاہتے ہیں۔ پاکستان کا دورہ کرنے والی ورلڈ الیون ٹیم کو تمام کرکٹ بورڈز اور آئی سی سی کی مدد حاصل ہے۔اپنی یادوں کو تازہ کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وہ90 کے دہے میں تین مرتبہ زمبابوے کی ٹیم کے ساتھ پاکستان کا دورہ کرچکے ہیں جن میں سے 1998 کا دورہ پاکستان ان کے لیے سب سے زیادہ یاد گار تھا۔ ورلڈ الیون ٹیم کے حوالے سے بات کرتے ہوئے کوچ اینڈی فلاور نے کہاکہ کہ ان کی ٹیم میں پاکستان کے خلاف جیتنے کے لیے بڑے کھلاڑی موجود ہیں یقین ہے کہ ورلڈ الیون میزبان ٹیم کے خلاف اچھی کارکردگی دکھائے گی۔ورلڈ الیون کی ٹیم بہترین کھلاڑیوں پر مشتمل ہے اور اس ٹیم کے تمام کھلاڑی پاکستان میں کرکٹ بحال کرنے کی کوشش کریں گے۔لاہور کے قذافی اسٹیڈیم میں پاکستان اور آئی سی سی ’ورلڈ الیون‘ کے درمیان پہلا ٹوئنٹی20 مقابلہ 12 ستمبر، دوسرا ٹوئنٹی20 مقابلہ13 ستمبر جبکہ تیسرا اور آخری مقابلہ15 ستمبر کو کھیلا جائے گا۔ورلڈ الیون ٹیم کی قیادت ڈوپلیسی اور پاکستانی ٹیم کے قیادت سرفراز احمد کررہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT