Monday , November 20 2017
Home / Top Stories / پاکستان کرکٹ کو یکایک بہتر بنانے کی جادوئی چھڑی نہیں

پاکستان کرکٹ کو یکایک بہتر بنانے کی جادوئی چھڑی نہیں

پی سی بی کے نئے چیف سلیکٹر انضمام الحق کی کھری کھری، نئی سلیکشن کمیٹی کا اعلان
کراچی ؍ لاہور ، 18 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) نومقررہ پی سی بی چیف سلیکٹر انضمام الحق نے آج واضح کردیا کہ اُن کے پاس کوئی جادوئی چھڑی نہیں ہے کہ پاکستان کی نیشنل کرکٹ ٹیم کی قسمت کو فوری طور پر بہتر بنادیں۔ انضمام نے عوام سے ٹیم کے معاملے میں صبر و تحمل سے کام لینے کی اپیل کی۔ انھوں نے لاہور میں میڈیا کانفرنس کو بتای: ’’میرے پاس کوئی جادوئی چھڑی نہیں اور پاکستان کرکٹ کو بہتری کی راہ پر ڈالنے کیلئے بہت کچھ کرنے کی ضرورت ہے تاکہ مضبوط ٹیم بنائی جاسکے۔ فوری طور پر میری ذمہ داری یہی ہے کہ ہم دورۂ انگلینڈ کیلئے متوازن اور پُراعتماد اسکواڈ کے انتخاب کو یقینی بنائیں۔ سابق ٹسٹ اسپنر توصیف احمد، سابق ٹسٹ اوپنر وجاہت اللہ واسطی اور سابق پاکستان آل راؤنڈر وسیم حیدر کو انضمام نے نئی سلیکشن کمیٹی کے اراکین بنایا ہے۔ انضمام نے کہا کہ پی سی بی نے نئی سلیکشن کمیٹی کو آزادی اور مداخلت کے بغیر کام کرنے کی مکمل چھوٹ فراہم کرنے کا وعدہ کیا ہے۔ انھوں نے کہا: ’’میں نے پی سی بی سے کہہ دیا کہ مجھے مکمل آزادی چاہئے تاکہ آزاد ذہن کے ساتھ کام کرتے ہوئے بہترین کھلاڑیوں کا انتخاب کرسکوں اور انھوں نے مجھے یقین دلایا ہے کہ ایسا ہی کیا جائے گا۔‘‘ اس موقع پر پی سی بی چیئرمین شہریار خان نے کہا کہ انھیں مسرت ہے کہ انضمام نے یہ ذمہ داری قبول کرلی ہے۔ ’’میں بہت خوشی ہوں کہ انضمام نے اس ذمہ داری کو قبول کیا ہے۔ ہم پی سی بی والے ان کا بہت احترام اور ان کے کارہائے نمایاں کی بہت قدر کرتے ہیں۔‘‘ انضمام جنھوں نے پی سی بی کی پیشکش کو قبول کرنے کیلئے افغانستان کے ہیڈکوچ کی حیثیت سے مستعفی ہوگئے، انھوں نے واضح کردیا کہ نیشنل ٹیم اور ڈومیسٹک کرکٹ میں بہتری کیلئے کچھ وقت لگے گا۔

TOPPOPULARRECENT