Thursday , December 14 2017
Home / دنیا / پاکستان کیخلاف محدود جنگ یا لائن آف کنٹرول پرمحاذ آرائی کیخلاف انتباہ

پاکستان کیخلاف محدود جنگ یا لائن آف کنٹرول پرمحاذ آرائی کیخلاف انتباہ

کشمیر کیلئے ایلچی مقرر کرنے کا مطالبہ، ہندوستان پر وادی کے عوام کی جدوجہد کچلنے کا الزام، شاہد عباسی کا اقوام متحدہ میں خطاب

اقوام متحدہ ۔ 22 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے اقوام متحدہ پر آج زور دیا کہ کشمیر کے لئے ایک ایلچی مقرر کیا جائے اور اپنے ملک کے خلاف ’’محدود جنگ‘‘ کے طریقہ کار کے استعمال کے خلاف ہندوستان کو انتباہ دیا اور کہا کہ ایسی کسی بھی کارروائی کا اس کے مماثل و مساوی انداز میں جواب دیا جائے گا۔ عباسی نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس سے اپنے پہلے خطاب کے دوران کشمیر کا مسئلہ اٹھایا اور الزام عائد کیا کہ وادی میں عوام کی جدوجہد کو ہندوستان کی طرف سے ’بہیمانہ انداز میں کچلا‘ جارہا ہے۔ شاہد خاقان نے اپنی مخالف ہند لن ترانی میں الزام عائد کیا کہ پاکستان کے خلاف دہشت گردوں کی سرگرمیوں ہندوستان ملوث ہورہا ہے اور خبردار کیا کہ اگر وہ (ہندوستان) لائن آف کنٹرول کے اس پار کوئی زورآممائی کرتا ہے یا پھر ان کے ملک کے خلاف ’’محدود جنگ‘‘ کے ’اصول‘ پر عمل کرتا ہے تو اس کی ایسی کارروائیوں کے مماثل و مساوی جواب دیا جائے گا۔ عباسی نے کہا کہ ’’مسئلہ کشمیر‘‘ کو عاجلانہ، منصفانہ اور پرامن طور پر حل کیا جانا چاہئے۔ پاکستان سے بات چیت کیلئے ہندوستان چونکہ تیار نہیں ہورہا ہے، سلامتی کونسل سے ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ جموں و کشمیر پر وہ (سلامتی کونسل) اپنی قراردادوں پر عمل آوری کیلئے ذمہ داریوں کی تکمیل کرے‘‘۔ انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل کو چاہئے کہ کشمیر کیلئے اپنی ایلیچی نامزد کریں۔ ’’ان کا فیصلہ سلامتی کونسل کی دیرینہ تاہم ہنوز روبہ عملی طلب قراردادوں کے مطابق ہونا چاہئے‘‘۔ انہوں نے ہندوپاک سرحد پر اس سال جنوری سے جنگ بندی کی 600 خلاف ورزیوں کے باوجود پاکستان نے صبروتحمل سے کام لیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT