Monday , November 20 2017
Home / کھیل کی خبریں / پاکستان کی کوچنگ میں غیرملکی کوچز کی دلچسپی

پاکستان کی کوچنگ میں غیرملکی کوچز کی دلچسپی

لاہور۔21 اپریل (سیاست ڈاٹ کام ) پاکستان کرکٹ بورڈ(پی سی بی) کی جانب سے پاکستانی ٹیم کے ہیڈ کوچ کے عہدے کیلئے درخواست جمع کروانے کی آخری تاریخ 25 اپریل تیزی سے قریب آتی جا رہی ہے لیکن ابھی تک کسی بھی پاکستانی کوچ نے اس عہدے کیلئے درخواست نہیں دی لیکن نصف درجن سے زائد غیر ملکی کوچز نے کوچنگ میں دلچسپی ظاہر کی ہے۔ تاہم پاکستان کرکٹ بورڈ کو اب بھی امید ہے کہ سابق فاسٹ بولر عاقب جاوید سمیت پاکستان سے ہی چند امیدوار ہیڈ کوچ کے عہدے کیلئے درخواست دیں گے۔ پاکستانی کرکٹرز نے تو اس عہدہ میں دلچسپی ظاہر نہیں کی لیکن غیر ملکی کوچز اس عہدے کے حصول میں خاصی دلچسپی رکھتے ہیں جن میں چند بڑے نام بھی شامل ہیں۔ اس دوڑ میں آسٹریلیائی سابق کھلاڑیوں ڈین جونز، ٹام موڈی، اسٹورٹ لا اور جمی سیڈل سمیت جنوبی افریقہ کے مکی آرتھر اور زمبابوین فلاور برادران شامل ہیں۔ یہ عہدہ ایشیا کپ اور ورلڈ کپ میں پاکستانی ٹیم کی ناقص کارکردگی کے بعد وقار یونس کی جانب سے استعفیٰ دیے جانے کے سبب خالی ہوا تھا۔ اس سے قبل عاقب جاوید کو عہدے کیلئے مضبوط امیدوار تصور کیا جا رہا تھا تاہم پی سی بی کی جانب سے کوچ کی تلاش کیلئے وسیم اکرم اور رمیز راجہ پر مشتمل دو رکنی پینل تشکیل دیے جانے پر عاقب دستبردار ہو گئے تھے اور الزام عائد کیا تھا کہ کمیٹی پہلے ہی غیر ملکی کوچ کی تقرری کیلئے اپنا ذہن بنا چکی ہے۔ سابق چیئرمین پی سی بی اعجاز بٹ کے دور میں کامیابی کے ساتھ ٹیم کی کوچنگ کرنے والے سابق اوپنر محسن خان نے بھی ہیڈ کوچ کے عہدے میں دلچسپی ظاہر کی تھی اور پی سی بی کی جانب سے چیف سلیکٹر بننے کی پیشکش مسترد کر دی تھی۔ تاہم محسن نے عہدے کیلئے درخواست دینے سے یہ کہتے ہوئے انکار کردیا کہ انہیں  اس کمیٹی کو اپنی قابلیت ثابت کرنے کی ضرورت نہیں کیونکہ وسیم اکرم اور رمیز راجہ دونوں ہی ان ہی جونیئر ہیں۔

TOPPOPULARRECENT