Wednesday , November 21 2018
Home / Top Stories / پاکستان کے ضمنی انتخابات میں پی ٹی آئی کو پانچ نشستوں پر شکست

پاکستان کے ضمنی انتخابات میں پی ٹی آئی کو پانچ نشستوں پر شکست

مظفرگڑھ میں دلچسپ مقابلہ، ماں نے بیٹے کو ہرایا

اسلام آباد ۔ 15 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم پاکستان عمران خان کی پارٹی پاکستان تحریک انصاف کو ضمنی انتخابات میں توقع کے مطابق نشستیں حاصل نہیں ہوئیں جبکہ اپوزیشن اتحاد جس کی قیادت سابق وزیراعظم نواز شریف کررہے ہیں یعنی پی ایم ایل (این) کو پانچ زائد نشستوں کا فائدہ ہوا۔ اس طرح اب قومی اسمبلی میں پاکستان تحریک انصاف کی پانچ نشستیں کم ہوگئی ہیں۔ پنجاب کے 9 اسمبلی حلقوں اور سندھ و خیبرپختونخواہ کے ایک ایک حلقوں میں اتوار کے روز رائے دہی ہوئی تھی۔ علاوہ ازیں 24 صوبائی نشستوں کیلئے بھی رائے دہی ہوئی تھی جن میں 11 پنجاب میں، 9 خیبرپختونخواہ میں اور سندھ و بلوچستان کی دو دو نشستیں شامل ہیں۔ یہاں اس بات کا تذکرہ ضروری ہیکہ ضمنی انتخابات زیادہ تر ایسی نشستوں کیلئے کروائے گئے تھے جہاں سے 25 جولائی کو منعقد شدہ عام انتخابات کے امیدوار زائد از ایک نشست پر منتخب ہوئے تھے جن میں وزیراعظم عمران خان بھی شامل ہیں جنہیں NA حلقوں کی تمام پانچوں نشستوں پر کامیابی حاصل ہوئی تھی اور بعدازاں ان امیدواروں نے بقیہ نشستوں سے استعفیٰ دیدیا تھا اس طرح وہ نشستیں مخلوعہ ہوگئی تھیں۔ ضمنی انتخابات میں پی ٹی آئی کو عمران خان کی جانب سے مخلوعہ دو نشستوں پر شکست ہوئی۔ لاہور (NA-131) کی مخلوعہ نشست پر سابق وزیر ریلویز اور پی ایم ایل (این) کے شعلہ بیان قائد خواجہ سعد رفیق کو کامیابی حاصل ہوئی جبکہ بنو میں متحدہ مجلس عمل کے امیدوار زاہد اکرم درانی نے پی ٹی آئی کے امیدوار نسیم علی شاہ کو شکست دی۔ پاکستان کے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی جنہیں دو حلقوں میں 25 جولائی کے عام انتخابات میں شکست ہوئی تھی، NA-124 لاہور حلقہ میں پی ٹی آئی کے امیدوار غلام محی الدین دیوان کو بہ آسانی شکست دی۔ قومی اسمبلی کیلئے پی ٹی آئی اور پی ایم ایل (این) کو فی کس چار چار نشستوں پر کامیابی ملی جبکہ پاکستان مسلم لیگ قائد کو دو نشستوں پر اور متحدہ مجلس عمل کو ایک نشست پر اکتفا کرنا پڑا۔ پاکستان الیکشن کمیشن نے یہ بات بتائی۔ PP-272 مظفر گڑھ میں پی ٹی آئی کی امیدوار زہرہ بتول نے اپنے بیٹے ہارون سلطان کو جو ایک آزاد امیدوار تھے، شکست دے دی۔ زہرہ بتول کو 24,019 ووٹ حاصل ہوئے اور ان کے بیٹے کو 17072 ووٹ حاصل ہوئے۔

TOPPOPULARRECENT