Monday , December 11 2017
Home / شہر کی خبریں / پرائیوٹ اسکولس میں غریب بچوں کو داخلے

پرائیوٹ اسکولس میں غریب بچوں کو داخلے

حق تعلیم قانون پر عمل آوری کے لیے ہائی کورٹ کی ہدایت
حیدرآباد ۔ 5 ۔ اپریل : ( سیاست نیوز ) : ہائی کورٹ حیدرآباد کی ڈیویژن بنچ نے تلنگانہ اور آندھرا پردیش ریاستوں کو ہدایت دی ہے کہ وہ تمام خانگی اسکولس کو سرکلر جاری کریں کہ وہ غریب بچوں کے لیے 25 فیصد داخلے محفوظ کریں ۔ عدالت نے کہا کہ یہ تلنگانہ اور آندھرا پردیش حکومتوں کی ذمہ داری ہے وہ بچوں کے لیے مفت اور لازمی تعلیم کے حق سے متعلق قانون 2009 پر عمل آوری کریں ۔ کارگذار چیف جسٹس دلیپ بی بھوسلے اور جسٹس پی نوین راؤ پر مشتمل بنچ نے کئی درخواستوں کی سماعت کرتے ہوئے یہ ہدایت دی ۔ درخواستوں میں عدالت سے استدعا کی گئی کہ وہ تلنگانہ اور آندھراپردیش کی حکومتوں کو ہدایت دے کہ وہ تمام غیر امدادی غیر اقلیتی اسکولس میں غریب طبقات کے بچوں کو 25 فیصد داخلے فراہم کرنے سے متعلق قانون پر عمل آوری کو یقینی بنائیں ۔ اڈیشنل ایڈوکیٹ جنرل تلنگانہ جے رام چندرا راؤ نے عدالت سے 3 ہفتے کی مہلت چاہی ہے ۔ عدالت نے کہا کہ قانون پر عمل کرنے کے لیے عدالت نے حکومت کو کئی مواقع دئیے ہیں ۔ بنچ نے خبردار کیا کہ قانون پر عمل آوری نہ کی گئی تو کارروائی کی جائے گی ۔ سماعت ملتوی کرتے ہوئے عدالت نے دونوں ریاستوں کی حکومتوں سے کہا کہ وہ تمام خانگی اسکولس کو سرکلر جاری کریں اور اس کی نقول اگلی سماعت تک عدالت میں پیش کریں ۔ مزید سماعت دو ہفتے بعد ہوگی ۔۔

TOPPOPULARRECENT