پرانا شہر کے لال دروازہ میں آج بونال پوجا اور کل جلوس

پولیس کے سخت ترین حفاظتی انتظامات ، مختلف راستوں کے رخ موڑ دئیے گئے

پولیس کے سخت ترین حفاظتی انتظامات ، مختلف راستوں کے رخ موڑ دئیے گئے
حیدرآباد ۔ 19 ۔ جولائی : ( سیاست نیوز) : پرانے شہر میں بونال تہوار اور جلوس کے پیش نظر سخت صیانتی انتظامات کئے جارہے ہیں ۔ سٹی پولیس کی جمعیت کے علاوہ مختلف اضلاع اور نیم فوجی دستوں کی زائد تعداد کو شہر طلب کرلیا گیا ہے ۔ پرانے شہر میں 20 جولائی کو بونال تہوار اور 21 جولائی کو جلوس ہے ۔ رمضان المبارک کے پیش نظر پولیس نے بونال کے موقع پر سخت چوکسی اختیار کرلی ہے ۔ ٹرافک کے رخ کو موڑنے کے علاوہ حساس اور انتہائی حساس علاقوں کو پولیس نے عملا اپنی گرفت میں لے لیا ہے ۔ اس خصوص میں ڈپٹی کمشنر آف پولیس ساوتھ زون مسٹر سروانیش ترپاٹھی نے بتایا کہ 20 جولائی کے دن پوجا اور 21 جولائی کو جلوس رہے گا ۔ ساوتھ زون کے تینوں ڈیویژن چارمینار ، فلک نما اور میر چوک میں 12 بجے دن تا 10 بجے رات تک جلوس رہے گا ۔ اس جلوس کے لیے جو لال دروازہ سے شروع ہوگا اور نیا پل پر ختم ہوگا ۔ ڈی سی پی نے بتایاکہ سٹی پولیس فورس کے علاوہ 4 آئی جی ، 5 ڈی آئی جی ، 3 ڈی سی پی ، 10 ایڈیشنل ڈی سی پی ، 30 ڈی ایس پی ، 58 زیر تربیت ڈی ایس پی ، 5 نیم فوج کے خصوصی دستے ، آر اے ایف کی دو کمپنیاں 40 پلاٹونس 300 خاتون پولیس کا نسٹبل ایک ہزار مرد کانسٹبل 150 تا 200 سب انسپکٹرس ایک سو انسپکٹرس 300 ہیڈ کانسٹبلز کو تعینات کیا جارہا ہے ۔ اس کے علاوہ سادہ لباس میں پولیس عملہ جلوس میں گشت کرے گا ۔ اور ویڈیو گرافی کے ذریعہ جلوس اور اس کے اہم راستوں پر خصوصی نظر رکھی جائے گی ۔ انہوں نے بتایا کہ عوام سے پرامن انداز میں تہوار کی خوشیاں منانے اور پولیس کا مکمل تعاون کرنے کی درخواست کی ۔ پرانے شہر میں ٹرافک تحدیدات بھی عائد کردی گئیں ہیں جو 21 جولائی کو 12 بجے دن تا رات 10 بجے جاری رہیں گے ۔ کندیکل گیٹ سے ٹرافک کو لال دروازہ کی جانب اجازت نہیں رہے گی ۔ بلکہ ٹرافک کو چھتری ناکہ پولیس اسٹیشن سے موڑ دیا جائے گا ۔ پھول باغ والی ٹرافک کو جو لال دروازہ کی جانب آتی ہے انہیں پتھر کی درگاہ سے اولڈ اے سی پی آفس چھتری ناکہ کی جانب موڑ دیا جائے گا ۔ بالا گنج کی ٹرافک کو گولی پورہ چوراہے سے گولی پورہ مارکٹ سدھا ٹاکیز سے آنے والی ٹرافک کو اشوکا پلر چوراہے سے ، میر کا دائرہ اور مغل پورہ کی ٹرافک کو شاہ علی بنڈہ کی طرف اجازت نہیں رہے گی ۔ بلکہ اس رخ کی ٹرافک کو ہری باولی چوراہے سے موڑ دیا جارہا ہے ۔ اپوگوڑہ اور چھتری ناکہ کی ٹرافک کو مغل پورہ پی ایس سے موڑ دیا جائے گا ۔ میر جملہ تالاب اور بھوانی نگر کی ٹرافک کو بی بی بازار چوراہے سے عالیجاہ کوٹلہ ، میر عالم منڈی کی طرف موڑ دیا جائے گا ۔ چندرائن گٹہ سے علی آباد کی طرف آنے والی ٹرافک کو شمشیر گنج ( نیو ) چوراہے سے جہاں نما تاڑبن کی طرف موڑ دیا جائے گا ۔ مغل پورہ سے چارمینار آنے والی ٹرافک کو عالیجاہ کوٹلہ چوک میدان خاں کی طرف موڑ دیا جائے گا ۔ یاقوت پورہ سے گلزار حوض والی ٹرافک کو میر عالم منڈی کی طرف اعتبار چوک مسجد کی طرف سے پرانی حویلی اور منڈی روڈ کی ٹرافک کو چھتہ بازار سے لکڑکورٹ کی طرف موڑ دیا جائے گا ۔ فتح دروازہ سے آنے والی ٹرافک کو ہمت پورہ چوراہے سے والگا ہوٹل سے خلوت اور موتی گلی کی جانب سے موڑ دیا جائے گا ۔ پرانا پل سے لال دروازہ کی ٹرافک کو موتی گلی سے شاہ گنج اور چیلہ پورہ کی طرف موڑ دیا جائے گا ۔ خلوت سے لال دروازہ کی ٹرافک کو موتی گلی سے شکر کوٹ والی ٹرافک کو مٹی کا شیر علاقہ سے گھانسی بازار کی طرف پرانا پل ارو محبوب کی مہندی سے آنے والی ٹرافک کو مسلم جنگ پل ، بیگم بازار کی طرف چادر گھاٹ ، نور خاں بازار اور دارالشفاء کی جانب سے آنے والی ٹرافک کو نیا پل سے آنے کی اجازت نہیں رہے گی ۔ بلکہ انہیں دارالشفاء سے گولی گوڑہ کی جانب موڑ دیا جائے گا ۔ گولی گوڑہ اور سدی عنبر بازار سے آنے والی ٹرافک کو افضل گنج چوراہے سے نیا پل کی جانب سے عثمانیہ جنرل ہاسپٹل سے منسلک موسیٰ ندی کی سڑک سے اجازت رہے گی ۔ مدینہ چوراہے سے انجن باولی جہاں کی سڑک بند کردی جائے گی ۔۔

TOPPOPULARRECENT