Wednesday , January 17 2018
Home / کھیل کی خبریں / پرجوش جنوبی افریقہ اور سری لنکا کے درمیان آج پہلا ٹسٹ

پرجوش جنوبی افریقہ اور سری لنکا کے درمیان آج پہلا ٹسٹ

گال ۔ 15 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) میزبان سری لنکا اور جنوبی افریقہ کے درمیان دو ٹسٹ مقابلوں کی سیریز کا پہلا مقابلہ کل یہاں گال میں کھیلا شروع ہورہا ہے جہاں ریکارڈس میزبان ٹیم کے حق میں ہیں تو دوسری جانب سری لنکا کی سرزمین پر اپنی پہلی ونڈے سیریز میں کامیابی سے مہمان جنوبی افریقی ٹیم کے کھلاڑیوں کے حوصلے کافی بلند ہیں۔ دونوں ٹیموں کے در

گال ۔ 15 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) میزبان سری لنکا اور جنوبی افریقہ کے درمیان دو ٹسٹ مقابلوں کی سیریز کا پہلا مقابلہ کل یہاں گال میں کھیلا شروع ہورہا ہے جہاں ریکارڈس میزبان ٹیم کے حق میں ہیں تو دوسری جانب سری لنکا کی سرزمین پر اپنی پہلی ونڈے سیریز میں کامیابی سے مہمان جنوبی افریقی ٹیم کے کھلاڑیوں کے حوصلے کافی بلند ہیں۔ دونوں ٹیموں کے درمیان کھیلی جارہی یہ ٹسٹ سیریز سری لنکا کے لئے سابق کپتان مہیلا جئے وردھنے اور جنوبی افریقہ کیلئے کپتان ہاشم آملہ کیلئے توجہ کا مرکز ہے چونکہ جئے وردھنے نے ٹسٹ سیریز سے سبکدوشی کا اعلان کردیا ہے جس کے بعد ان کے کیریئر میں اب طویل طرز کے چند مقابلے باقی رہ گئے ہیں۔ دوسری جانب ہاشم آملہ کیلئے یہ سیریز اس لئے توجہ کا مرکز بنی ہوئی ہے کیونکہ وہ پہلی مرتبہ غیر سفید فام کپتان بننے کے بعد پہلی سیریز میں ٹیم کی قیادت کررہے ہیں۔

جنوبی افریقی ٹیم یہاں گال میں جئے وردھنے کی گذشتہ سیریز میں ریکارڈ ڈبل سنچری سے اچھی طرح واقف ہے۔ علاوہ ازیں ایک دہے قبل جئے وردھنے نے جنوبی افریقہ کے خلاف بھی 374 رنز کی ریکارڈ اننگز بھی کھیلی تھی جبکہ گال کا میدان جئے وردھنے کے علاوہ سری لنکا کیلئے کافی خوش قسمت میدان تصور کیا جاتا ہے۔ جنوبی افریقہ کے خلاف سیریز کیلئے سری لنکائی ٹیم میں زیادہ تبدیلیاں نہیں کی گئی ہیں کیونکہ ان ہی کھلاڑیوں کو برقرار رکھا گیا ہے جنہوں نے انگلینڈ کے خلاف تاریخ ساز کامیابی حاصل کی ہے۔ ہیڈنگلی میں سری لنکا نے انگلینڈ کے خلاف کامیابی حاصل کرتے ہوئے انگلش سرزمین پر پہلی ٹسٹ سیریز کامیابی حاصل کی ہے جس میں فاسٹ بولروں نوون پردیپ کے مقام پر سورنگالکمل کی واپسی ہوئی ہے جبکہ دمیکا پرساد اور شمنڈا ایرنگا اپنا مقام برقرار رکھنے میں کامیاب ہے۔

مذکورہ فاسٹ بولروں میں کوئی عالمی شہرت یافتہ بولر نہیں لیکن یہ اتنے ذہین بولر ضرور ہیں جو کہ حریف ٹیم کیلئے مشکلات پیدا کرسکتے ہیں۔ سری لنکا کیلئے جنوبی افریقہ کے خلاف سب سے بڑا ہتھیار اسپنر رنگناہیراتھ ہوسکتے ہیں جنہوں نے لیجنڈری اسپنر متھیا مرلی دھرن کے بعد سری لنکا کی ٹیم اہم اسپنر کا کردار نبھایا ہے۔ جب کبھی ہیراتھ کامیاب ہوئے ہیں، ان مقابلوں میں سری لنکا نے 90 فیصد کامیابی حاصل کی ہے۔ 34 سالہ ہیراتھ کا گال میں ریکارڈ کافی متاثرکن ہے اور وہ یہاں ہاشم آملہ اور اے بی ڈی ولیرس کے ساتھیوں کیلئے مسائل پیدا کرسکتے ہیں۔ جنوبی افریقی ٹیم کا خیمہ بھی پرعزم اور پرجوش ہے

کیونکہ اس نے سری لنکا کے خلاف یہاں پہلی مرتبہ ونڈے سیریز میں کامیابی حاصل کی ہے۔ تاہم ہاشم آملہ کیلئے بحیثیت کپتان یہ پہلا امتحان ہے جہاں انہیں گرائم اسمتھ اور جیک کیالیس جیسے تجربہ کار کھلاڑیوں کی خدمات دستیاب نہیں لیکن ٹیم میں چند ایسے نئے چہرے موجود ہیں جو کہ اپنی موجودگی کا احساس دلانے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔ جنوبی افریقی ٹیم میں شامل نئے چہروں میں ڈین پیڈٹ توجہ کا مرکز ہوں گے کیونکہ سیدھے ہاتھ کے آف اسپنر گھریلو کرکٹ میں ایک انقلابی دریافت ثابت ہوئے ہیں اور امید ہیکہ وہ آل راونڈر ستیان وین زیل کے ساتھ قطعی 11 کھلاڑیوں میں شامل رہیں گے۔ زیل کا بیٹنگ اوسط تقریباً 50 ہے جبکہ وہ جزوقتی طور پر میڈیم فاسٹ بولنگ بھی کرتے ہیں جس سے مہمان ٹیم کو فائدہ ہوسکتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT