Monday , July 16 2018
Home / شہر کی خبریں / پسماندہ طبقات کو بہر صورت 34فیصد تحفظات کی فراہمی کا عہد

پسماندہ طبقات کو بہر صورت 34فیصد تحفظات کی فراہمی کا عہد

50فیصدسے تجاوز نہ کرنے ہائیکورٹ کے فیصلہ کو سپریم کورٹ میں چیلنج کرنے کا فیصلہ : ایٹالہ راجندر
حیدرآباد۔/11 جولائی، ( سیاست نیوز) کابینی سب کمیٹی نے بہر صورت بی سی طبقات کو 34 فیصد تحفظات فراہم کرنے کی قرارداد منظور کی۔ 50فیصد سے زائد تحفظات تجاوز نہ کرنے ہائی کورٹ کے فیصلہ کو سپریم کورٹ میں چیلنج کرنے کا فیصلہ کیا۔ ریاستی وزیر پنچایت راج جے کرشنا راؤ کی صدارت میں آج سکریٹریٹ میں کابینی سب کمیٹی کا اجلاس منعقد ہوا جس میں ریاستی وزراء ایٹالہ راجندر، کے ٹی آر ، ٹی ناگیشور راؤ، ہریش راؤ، اندرا کرن ریڈی کے علاوہ وزیر بی سی ویلفیر جوگور امنا نے خصوصی شرکت کی۔ اس کے علاوہ اجلاس میں چیف سکریٹری ڈاکٹر ایس کے جوشی، محکمہ پنچایت راج کے پرنسپل سکریٹری وکاس راج کمشنر نیتو پرساد ایڈیشنل ایڈوکیٹ جنرل رامچندر راؤ سکریٹری محکمہ قانون نرنجن راؤ نے بھی شرکت کی۔ سب کمیٹی کے اجلاس میں ہائی کورٹ کے عبوری حکمنامہ پر تفصیلی غور و خوض کرنے کے بعد بی سی طبقات کو 34 فیصد تحفظات فراہم کرنے کیلئے سپریم کورٹ سے رجوع ہونے سے اتفاق کیا گیا۔ کابینی سب کمیٹی کے صدر نشین جے کرشنا راؤ نے کہا کہ مقررہ وقت پر پنچایت راج کے انتخابات کرانے کیلئے محکمہ پنچایت راج کی جانب سے تمام کارروائی مکمل کرلی گئی ہے۔ تاہم بی سی طبقات کو 34 فیصد تحفظات فراہم کرنے کے معاملے میں چند افراد ہائی کورٹ سے رجوع ہوئے ہیں۔ ہائی کورٹ کے عبوری حکمنامہ کا اجلاس میں تفصیلی جائزہ لیا گیا۔ جاریہ ماہ کے اواخر تک گرام پنچایتوں کی میعاد مکمل ہورہی ہے اس سے قبل انتخابات منعقد نہ ہونے کی صورت میں کئے جانے والے اقدامات پر کابینی سب کمیٹی کے اجلاس میں غور کیا گیا۔ بعد ازاں میڈیا سے خطاب کرتے ہوئے جے کرشنا راؤ، ایٹالہ راجندر، ٹی ناگیشور راؤ اور جوگو رامنا نے کہا کہ ماضی میں سپریم کورٹ نے پنچایت راج انتخابات میں 61فیصد تحفظات پر عمل کرنے کی گنجائش فراہم کی تھی۔ ہائی کورٹ نے 50 فیصد تحفظات تجاوز نہ کرنے کا جو حکمنامہ جاری کیا ہے اس کو سپریم کورٹ میں اپیل کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ ایٹالہ راجندر نے کہا کہ پنچایت راج انتخابات کرانے کیلئے حکومت پوری طرح تیار ہے۔ انہوں نے کہا کہ 31جوئی تک گرام پنچایتوں کی میعاد مکمل ہوجائے گی اس کے بعد اسپیشل آفیسرس کو گرام پنچایتوں کی ذمہ داری حوالے کرنے کابینی سب کمیٹی کے اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT