Tuesday , December 12 2017
Home / ہندوستان / پلوامہ انکاؤنٹر کے بعد سرینگر کے حصوں میں تحدیدات

پلوامہ انکاؤنٹر کے بعد سرینگر کے حصوں میں تحدیدات

سرینگر ، 2 اگسٹ (سیاست ڈاٹ کام) حکام نے آج علحدگی پسندوں کی ہڑتال کے تناظر میں سرینگر کے حصوں میں تحدیدات لاگو کردیئے۔ یہ ہڑتال پلوامہ میں سکیورٹی فورسیس اور عسکریت پسندوں کے درمیان فائرنگ کے تبادلے کی زد میں آنے سے ایک عام شہری کی ہلاکت کے خلاف احتجاج ہے۔ پولیس نے کہا کہ سید علی شاہ گیلانی اور میرواعظ عمر فاروق کی قیادت والے حریت کانفرنس کے دونوں گروپوں اور جے کے ایل ایف سربراہ محمد یٰسین ملک نے عوام سے اپیل کی ہے کہ گزشتہ روز فردوس احمد کی ہلاکت کے خلاف بند منائیں۔ وہ انکاؤنٹر کے مقام کے قریب مارا گیا، جہاں دو لشکر طیبہ عسکریت پسندوں بشمول اس تنظیم کے کمانڈر ابودوجانہ کو گولی مار دی گئی۔ ایک پولیس عہدہ دار نے کہا کہ اس واقعہ کے پیش نظر بطور احتیاط تحدیدات لاگو کی گئی ہیں تاکہ لا اینڈ آرڈر برقرار رکھا جاسکے۔یہ تحدیدات سرینگر کے سات پولیس اسٹیشن حدود خان یار، ایم آر گنج، سفاکادل، ریناواڑی، کرال کھڈ، نوہٹہ اور میسومہ میں لاگو کئے گئے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT