Tuesday , September 25 2018
Home / کھیل کی خبریں / پلے آف میں جگہ پکی کرنا آج چینائی کا مقصد ، راجستھان سے مقابلہ

پلے آف میں جگہ پکی کرنا آج چینائی کا مقصد ، راجستھان سے مقابلہ

جے پور، 10مئی (سیاست ڈاٹ کام) مہندر سنگھ دھونی کی چینائی سپر کنگ جمعہ کو راجستھان رائلس کے خلاف اپنے اگلے آئی پی ایل ٹوئنٹی 20 میچ میں جیت کے ساتھ پلے آف میں جگہ پکی کرنے اترے گی۔ آئی پی ایل 11 میں چینائی نے زبردست شروعات کی تھی اور وہ کافی وقت ٹیبل میں سب سے اوپر رہی، لیکن سنرائزرس حیدرآباد نے اسے پیچھے چھوڑ دوسرے نمبر پر کھسکا دیا ہے ۔چینائی فی الحال اپنے 10 میچوں میں 14 پوائنٹس لے کر دوسرے نمبر پر ہے اور اگر راجستھان کو وہ اگلے مقابلے میں اس کے گھریلو میدان پر شکست دے دیتی ہے تو پلے آف میں وہ 16 پوائنٹس کے ساتھ اپنی جگہ پکی کر لے گی۔ دوسری طرف راجستھان اس وقت نازک حالت میں ہے ۔اس نے اپنا پچھلا میچ کنگز الیون پنجاب سے 15 رنز سے جیت کر امیدیں برقرار رکھی ہیں۔اگرچہ راجستھان اب ایک بھی میچ کھو دیتا ہے تو اس کیلئے پلے آف کی دوڑ ناممکن ہو سکتی ہے کیونکہ وہ اب 10 میچوں میں چار جیت اور چھ ہار کے ساتھ آٹھ پوائنٹس لے کر چھٹے نمبر پر ہے ۔ اگرچہ باقی میچوں میں اس کی کارکردگی کے ساتھ دیگر ٹیموں کے نتائج اس کا فیصلہ کرنے میں اب اہم کردار ادا کریں گے ایسے میں اجنکیا رہانے کی ٹیم کو ہر حال میں اس میچ کو جیتنے کی کوشش کرنی ہوگی۔ چینائی کیلئے اگرچہ حالات معمول پرہیں اور اس کے ابھی ٹورنامنٹ میں چار میچ باقی ہیں۔ دھونی کی ٹیم اگر اپنی جیت کی تال برقرار رکھتی ہے تو اس کے پاس ٹیبل میں اب بھی سب سے اوپر آنے کا موقع رہے گا اور اس کی کوشش ہوگی کہ وہ ناک آؤٹ راؤنڈ میں اور مضبوطی کے ساتھ پہنچے ۔چینائی نے اپنے گزشتہ میچ میں رائل چیلنجرز بنگلور کو چھ وکٹ سے شکست دی تھی۔ آئی پی ایل کا 11 واں سیزن اب اپنے آخری پڑاؤ پر جا پہنچا ہے اور کئی ٹیموں کے معاملات کافی الجھے ہوئے ہیں جن میں راجستھان بھی ہے ۔ٹیم کو کھیل کے تینوں شعبوں میں بہتری کی ضرورت ہے ۔اگر اس کی ماضی کی کارکردگی کو دیکھیں تو اس کی بلے بازی خاص نہیں تھی اور کپتان رہانے نو رن پر ہی آؤٹ ہو گئے جبکہ وکٹ کیپر جوس بٹلر 82 رنز بنا کر اکیلے نصف سنچری بنانے والے رہے تھے ۔ٹیم کا دیگر کوئی کھلاڑی بڑی اننگز نہیں کھیل سکا۔ سنجو سامسن پر بھی رنز کیلئے ٹیم بہت زیادہ منحصر نظر آتی ہے ، لیکن انہوں نے گزشتہ تین میچوں میں 22،28 اور 3 رنز کی اننگز ہی کھیلی ہیں۔ایسے میں راجستھان کے بلے بازوں کو اپنے کھیل میں بہتری کی ضرورت ہے ۔ٹیم کے گیند بازوں نے لیکن گزشتہ میچ میں کہیں بہتر کھیل کا مظاہرہ کیا اور پنجاب کے مضبوط بلے بازی آرڈر کو سات وکٹ پر 143 رن کے اسکور پر روک لیا جس سے ٹیم جیتنے میں کامیاب رہی۔ راجستھان کے جوفرا آرچر نے پانچ میچوں میں 8.17 کے اکونومي ریٹ سے سب سے زیادہ نو وکٹ لئے ہیں۔اس کے علاوہ کے گوتم (آٹھ وکٹ)، جے دیو انادکٹ، بین اسٹوکس، ایش سوڈھی اچھے کھلاڑی ہیں جو چینائی کے جارحانہ بلے بازوں کو روکنے میں کردار ادا کر سکتے ہیں۔ چینائی کے پاس دھونی کے علاوہ، امباٹي رائیڈو، سریش رینا اور شین واٹسن جیسے قابل بلے باز ہیں۔رائیڈو 10 میچوں میں 423 رنز بنا کر ٹیم کے ٹاپ اسکورر ہیں اوراپنی اسی کارکردگی کی بدولت دو سال بعد انہیں قومی ٹیم میں بھی بلاوا ملا ہے ۔ وہیں تیسرے خطاب کے لئے کھیل رہی چینائی کا گیند بازی آرڈر بھی زبردست ہے . دیپک چاھر، واٹسن، شاردل ٹھاکر، ڈوائن براوو، رویندر جڈیجہ اس کے اہم بولر ہیں۔اپنے کھیل کو لے کر کئی بار تنقید برداشت کرنے والے جڈیجہ نے گزشتہ میچ میں چار اوور میں 18 رن پر سب سے زیادہ تین وکٹ نکالے تھے وہیں آف اسپنر ہربھجن سنگھ نے بھی دو وکٹ لئے تھے ۔

TOPPOPULARRECENT