Tuesday , December 12 2017
Home / دنیا / پناہ گزینوں کو جسم فروشی پر اکسانے کا اسکینڈل

پناہ گزینوں کو جسم فروشی پر اکسانے کا اسکینڈل

برلن ۔ 28اکتوبر ۔(سیاست ڈاٹ کام) جرمن سکیورٹی ایجنسز کا لرزہ خیز اسکینڈل منظر عام پر آ گیا، جرمن سکیورٹی کمپنیاں پناہ گزینوں کو جسم فروشی پر اکسانے لگیںہیں،اس اسکینڈل نے جرمن حکومت کو بھی ہلا کر رکھ دیا ہے۔ جرمن ذرائع ابلاغ نے انکشاف کیا ہے کہ پناہ گزینوں کی نگرانی کیلئے قائم سکیورٹی کمپنیاں پناہ گزینوں بالخصوص کم عمر افراد کو جسم فروشی کے مکروہ دھندے پر مجبور کرتی ہیں۔جرمن چانسلر انجیلا میرکل کے ترجمان اسٹیفن زابیرٹ نے خبروں پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ جو شخص بھی جسم فروشی جیسے شرمناک دھندے میں ملوث پایا گیا اس کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔ حکومت اس طرح کے اخلاقی جرائم کی شدید مذمت کرتے ہوئے ان سے سختی سے نمٹے گی۔پناہ گزین کیمپ کے ایک سکیورٹی اہلکار نے بتایا کہ بہت سے پناہ گزین جسم فروشی کرنا چاہتے ہیں۔

 

دہری شہریت آسٹریلیائی نائب وزیر اعظم نااہل
سڈنی۔ 28اکتوبر ۔(سیاست ڈاٹ کام) آسٹریلیائی عدالت نے نائب وزیر اعظم بارنبی جوئس کو دہری شہریت رکھنے پر نا اہل قرار دے دیا۔ آسٹریلیائی ہائیکورٹ نے نائب وزیراعظم بارنبی جوئس کے انتخاب کو غلط قرار دیتے ہوئے انہیں نااہل قرار دیا جب کہ عدالت نے دیگر 4 ارکان کے چناؤ کو بھی غلط قرار دیا۔ نا اہل نائب وزیر اعظم بارنبی جوئس کے پا س نیوزی لینڈ کی شہریت بھی تھی اور رواں سال جولائی میں ہونے والے انتخابات سے قبل انہوں نے اس کا ذکر نہیں کیا تھا۔ آسٹریلیا کے آئین کے مطابق دہری شہریت کے حامل افراد انتخابات میں حصہ نہیں لے سکتے۔ نا اہلی کے بعد بارنبی جوئس کا کہنا تھا کہ وہ عدالتی فیصلے کا احترام کرتا ہے، ہم ایک شاندار جمہوریت میں رہتے ہیں جہاں ہمیں آزادیوں سے لطف اندوز ہونے کے لیے بعض پابندیوں کا بھی سامنا کرنا پڑتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT