Tuesday , September 25 2018
Home / ہندوستان / پوشیدہ دولت کے انکشاف کیلئے خصوصی شعبہ کا قیام

پوشیدہ دولت کے انکشاف کیلئے خصوصی شعبہ کا قیام

نئی دہلی ۔ 14 مئی (سیاست ڈاٹ کام) قانون کالادھن کے نفاذ سے قبل حکومت آئندہ دو تین ہفتوں میں ایک خصوصی سیل (شعبہ) کا قیام عمل میں لائے گی تاکہ بیرونی ممالک میں پوشیدہ دولت رکھنے والے 30 فیصد ٹیکس اور 30 فیصد جرمانہ ادا کرکے ہندوستان میں لاسکے۔ پارلیمنٹ میں قانون کالادھن کی منظوری کے ایک دن بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے وزیرفینانس ارون جی

نئی دہلی ۔ 14 مئی (سیاست ڈاٹ کام) قانون کالادھن کے نفاذ سے قبل حکومت آئندہ دو تین ہفتوں میں ایک خصوصی سیل (شعبہ) کا قیام عمل میں لائے گی تاکہ بیرونی ممالک میں پوشیدہ دولت رکھنے والے 30 فیصد ٹیکس اور 30 فیصد جرمانہ ادا کرکے ہندوستان میں لاسکے۔ پارلیمنٹ میں قانون کالادھن کی منظوری کے ایک دن بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے وزیرفینانس ارون جیٹلی نے کہا جو لوگ بیرونی ممالک میں غیرمحسوب دولت رکھتے ہیں اور رضاکارانہ طور پر پوشیدہ دولت کا انکشاف کرنے میں پس وپیش کرتے ہیں، ان کیلئے حکومت نے ایک نئی سہولت Compliance Windou فراہم کی ہے جبکہ نئے قانون کالادھن نے ان افراد کو یہ موقع فراہم کیا ہیکہ اپنی غیرمعلنہ دولت کا اعلان کرتے ہوئے 60 فیصد ٹیکس اور جرمانہ ادا کرے اور باقیماندہ دولت کو جائز طریقہ سے منتقل کرلیں بصورت دیگر ان کے خلاف قانونی چارہ جوئی پر 10 سال کی سزائے قید ہوگی۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT