Tuesday , September 25 2018
Home / کھیل کی خبریں / پولارڈ اور رامدین نے ویسٹ انڈیز کو شرمناک شکست سے بچالیا

پولارڈ اور رامدین نے ویسٹ انڈیز کو شرمناک شکست سے بچالیا

سینٹ جارج۔21اگست ( سیاست ڈاٹ کام ) آل راؤنڈ کیرن پولارڈ اور وکٹ کیپر بیٹسمین دنیش رامدین نے ویسٹ انڈیز کو یہاں بنگلہ دیش کے خلاف نیشنل اسٹیڈیم میں منعقدہ پہلے ونڈے میں شرمناک شکست سے محفوظ رکھتے ہوئے تین وکٹوں کی کامیابی دلوائی ہے ۔ بنگلہ دیش جس نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے 217/9 رنز اسکور کئے تھے اور جوابی اننگز نے ویسٹ انڈیز کی ٹیم ایک موق

سینٹ جارج۔21اگست ( سیاست ڈاٹ کام ) آل راؤنڈ کیرن پولارڈ اور وکٹ کیپر بیٹسمین دنیش رامدین نے ویسٹ انڈیز کو یہاں بنگلہ دیش کے خلاف نیشنل اسٹیڈیم میں منعقدہ پہلے ونڈے میں شرمناک شکست سے محفوظ رکھتے ہوئے تین وکٹوں کی کامیابی دلوائی ہے ۔ بنگلہ دیش جس نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے 217/9 رنز اسکور کئے تھے اور جوابی اننگز نے ویسٹ انڈیز کی ٹیم ایک موقع پر محض 34رنز کے اسکور پر پانچ وکٹیں گنوا چکی تھی ‘ اس نازک صورتحال میں پولارڈ اور رام دین نے چھٹی وکٹ کیلئے 145رنز کی پارٹنرشپ نبھاتے ہوئے ٹیم کو کامیابی کی سمت گامزن کیا ۔ پولارڈ نے 89رنز اور رامدین نے 74رنز اسکور کئے جب کہ مقابلے کے 40ویں اوورس میں جیسن ہولڈر نے کامیابی کیلئے درکار رنز اسکور کیا ۔

اس مقابلہ کے بعد اظہار خیال کرتے ہوئے بنگلہ دیش کے کپتان مشفق الرحیم نے کہا کہ حریف بیٹسمینوں نے مثبت کرکٹ کھیلنے کے علاوہ بنگلہ دیشی بولنگ شعبہ کے محدود ہونے کا فائدہ بھی اٹھایا ۔ میڈیم فاسٹ بولر الامین حسین کامیاب بولر ثابت ہوئے جنہوں نے ویسٹ انڈیز کی گرنے والی ابتدائی پانچ وکٹوں میں تین وکٹیں حاصل کرنے کے علاوہ مجموعی طور پر 51رنز کے عوض چار کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا ۔ امین کی چوتھی وکٹ پولارڈ رہے جنہیں محمود اللہ نے ایک ناقابل یقین کیچ پکڑتے ہوئے پویلین کی راہ دکھائی ۔ جس وقت ٹیم کامیابی کے قریب تھی اُس موقع پر پولارڈ نے خود کو سنچری کے قریب لے جانے کیلئے تیز رفتار بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور یکے بعد دیگرے چھکے مارنے کی کوشش میں آوٹ ہوگئے ۔ کامیابی کے بعد اظہار خیال کرتے ہوئے پولارڈ نے کہا کہ میں نے اپنے آپ پر قابو رکھتے ہوئے دنیش کے ساتھ مقابلہ میں ٹیم کو کامیابی سے ہمکنار کرنے میں اپنا رول ادا کیا ۔ مجھے کسی کے مشورہ کی ضرورت نہیں کیونکہ میں اچھی طرح جانتا ہوں کہ مجھے کیا کرنا ہے ۔ آج کے مقابلے میں ‘ میں نے وہی کیا ۔ قبل ازیں بنگلہ دیش کے اوپنر انعام الحق نے سنچری اسکور کرتے ہوئے ٹیم کے اسکور کو 217تک پہنچایا ۔ ویسٹ انڈیز نے ٹاس جیت کر ایک مشکل وکٹ پر بنگلہ دیش کو بیٹنگ کیلئے مدعو کیا لیکن انعام الحق نے 109رنز کی شاندار اننگز کھیلی۔

ساتھی اوپنر تمیم اقبال اور لوور آرڈر میں ناصر حسین نے فی کس 26رنز اسکور کرتے ہوئے ٹیم کیلئے دوسرا انفرادی اعظم ترین اسکور بنایا ۔ ویسٹ انڈیز کیلئے ڈیون براؤو کامیاب بولر ثابت ہوئے جنہوں نے 32رنز کے عوض چار کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا جس میں اننگز کے آخری اوورس میں مشرف مرتضیٰ اور انعام الحق کی وکٹیں بھی شامل ہیں ۔ ویسٹ انڈیز کیلئے یہ کامیابی اس لئے بھی اہم رہی کیونکہ مقابلہ کے چند گھنٹے قبل کوچ اوٹس گبسن کو عہدہ سے برطرف کردیا گیاتھا ۔ 21سالہ انعام الحق نے اپنی دوسری سنچری بھی ویسٹ انڈیز کے خلاف ہی بنائی ہے ۔ جیسا کہ 2012کی سیریز میں انہوں نے حریف ٹیم کے خلاف 120رنز کی شاندار اننگز کھیلی تھی ۔ اوپنر کی سنچری بھی بنگلہ دیش کیلئے اہم رہی کیونکہ دوسرے سرے سے مسلسل وکٹیںگررہی تھی اور 34ویں اوورس میں بنگلہ دیش کا اسکور 141/5ہوچکا تھا ۔ تین مقابلوں کی سیریز کا دوسرا مقابلہ اسی میدان پر جمعہ کو کھیلا جائے گا ۔

TOPPOPULARRECENT