Tuesday , September 25 2018
Home / شہر کی خبریں / پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ باعث تشویش

پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ باعث تشویش

عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمت میں کمی ، خصوصی توجہ دہانی کے تحت کونسل میں بحث
حیدرآباد ۔ 7۔ نومبر (سیاست نیوز) عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمت میں کمی کے باوجود پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ پر قانون ساز کونسل میں محمد علی شبیر نے تشویش کا اظہار کیا ۔ خصوصی توجہ دہانی کے تحت یہ مسئلہ اٹھاتے ہوئے محمد علی شبیر نے کہا کہ ایسے وقت جبکہ خام تیل کی قیمت میں کمی کا اثر پٹرول ، ڈیزل اور گیاس کی قیمت پر پڑنا چاہئے لیکن تلنگانہ میں قیمتوں میں اضافہ ہورہا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ حکومت نے ملک کیلئے ایک ٹیکس کے نام پر جی ایس ٹی کو متعارف کیا ۔ حکومت نے 35 مختلف اشیاء کو جی ایس ٹی کے دائرہ سے باہر لانے کا تیقن دیا ہے۔ محمد علی شبیر نے کہا کہ پٹرول ، ڈیزل اور پکوان گیاس کی قیمتوں میں ہر ماہ اضافہ ہورہا ہے۔ عالمی منڈی میں چند سال قبل خام تیل کی قیمت 140 ڈالر فی بیارل تھی جو اب گھٹ کر 50 ڈالر تک پہنچ چکی ہے۔ ایسے میں پٹرول کی قیمت فی لیٹر 35 روپئے ہونی چاہئے جبکہ تلنگانہ میں پٹرول 73 روپئے فی لیٹر فروخت ہورہا ہے۔ اسی طرح ڈیزل 25 روپئے فی لیٹر ہونا چاہئے جبکہ موجودہ قیمت 63 روپئے ہے۔ انہوں نے وزیر فینانس ای راجندر سے خواہش کی کہ وہ مرکزی حکومت پر اثر انداز ہوتے ہوئے قیمتوں میں کمی کے اقدامات کریں۔ انہوں نے کہا کہ ویاٹ اور اسٹیٹ ٹیکسیس میں کمی کے ذریعہ ہی قیمت میں کمی کی جاسکتی ہے۔ انہوں نے پٹرول ، ڈیزل اور گیاس کو جی ایس ٹی کے دائرہ میں لانے کا مطالبہ کیا۔ وزیر فینانس ای راجندر نے یہ تیقن دیا کہ حکومت اس سلسلہ میں ضروری اقدامات کرے گی۔

TOPPOPULARRECENT