پٹرول پمپس پر الیکٹرک کار چارجنگ کی سہولت

نئی دہلی، 24 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) ملک کے تمام پٹرول پمپوں پر بیٹری چارجنگ کی سروس اور چارجڈ بیٹری حاصل کرنے کی سہولت ہونے سے سڑکوں پر برقی گاڑیوں کی اسکیم 2030 تک کامیاب ہو سکے گی۔یہ کہنا ہے آئی آئی ٹی مدراس ریسرچ پارک کے انوویشن اسکیم کے انچارج اور معروف الیکٹرک انجینئر پروفیسر اشوک جھنجھن والا کا، جو ملک میں برقی گاڑی کے نظام کے محرک ہیں۔ پدم شری سے نوازے گئے مسٹر جھنجھن والا نے مدراس آئی آئی ٹی کے دورے پرآئے صحافیوں کو بتایا کہ انہوں نے وزارت توانائی کے مشیر کے طور پر یہ آئیڈیاحکومت کو دیا تھا۔اور اب بہت سی پٹرول کمپنیوں اور بیٹری کمپنیوں نے اس منصوبہ میں دلچسپی ظاہر کی ہے ۔ اگر ملک کے تمام پٹرول پمپس پر یہ سروس دستیاب ہو جائے تو ملک میں سبز توانائی کے میدان میں انقلاب آ جائے گا اور گاڑیوں کی آلودگی ختم ہو جائے گی۔ غیر ملکی کرنسی کی بچت ہو گی اور پٹرول ڈیزل سے مہنگائی کی مار بھی کم ہو جائے گی۔پروفیسر جھنجھنوالا نے کہا کہ اگر حکومت اس منصوبہ بندی کو لاگو نہیں کرتی اور ملک میں ان گاڑیوں کی تعمیر نہیں ہو گی اور بیٹریاں بڑے پیمانے پر نہیں بنتی ہے تو ہمیں بیرون ملک سے سب کچھ درآمد کرنا پڑے گا جس سے روزگار میں بھاری کمی آئے گی اور جی ڈی پی 11 فیصد تک کم ہو جائے گی۔

TOPPOPULARRECENT