Tuesday , December 12 2017
Home / سیاسیات / پٹھان کوٹ انکوائری میں مرکز کی دخل اندازی : کانگریس

پٹھان کوٹ انکوائری میں مرکز کی دخل اندازی : کانگریس

تمام باہمی مسائل اور مذاکرات پر حکومت کا واضح موقف : بی جے پی
نئی دہلی ۔ 8 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس نے آج مودی حکومت پر الزام عائد کیا کہ وہ پٹھان کوٹ حملہ کی تحقیقات پاکستان سے کرواکر اس کیس کی وطن میں تحقیقات میں دخل دے رہی ہے۔ بی جے پی نے اس الزام کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ تمام باہمی مسائل اور مذاکرات کے بارے میں حکومت ِہند کا موقف مکمل طور پر واضح ہے اور اس کی ستائش کی جاتی ہے۔ کانگریس کے ترجمان ابھیشیک سنگھوی نے کہا کہ حکومت تحقیقات میں مکمل طور پر دخل اندازی کررہی ہے۔ اس سے زیادہ دخل اندازی اور کیا ہوسکتی ہے۔ پاکستانیوں پر الزام عائد کیا جارہا ہے لیکن اس میں کوئی شک نہیں کہ حکومت ہند خود بدقسمتی سے ان کی انگلیوں کے نشانہ پر ناچ رہی ہے۔ ترجمان نے کہا کہ پاکستان کو اس  حملہ کی تحقیقات کرنے کیلئے مدعو کرکے ہم نے گزشتہ تقریباً 70 سال کی پاکستانی کارروائیوں کو جواز عطا کردیا ہے اور یہ تحقیقاتی ٹیم جیسے ہی اپنے وطن واپس ہوئی، اس نے ہمارے گال پر کرارا طمانچہ رسید کیا۔ مہلوکین کو دہشت گردی کے مرتکبین کے مساوی قرار دیا جارہا ہے۔ ان الزامات کی تردید کرتے ہوئے بی جے پی کے ترجمان لنن کوہلی نے کہا کہ پٹھان کوٹ دہشت گرد حملہ کے بعد وزیراعظم پاکستان نے کہا کہ کارروائی کی جارہی ہے اور اسی پس منظر میں مشترکہ تحقیقاتی ٹیم ہندوستان آئی تھی۔ اب یہ پاکستان کی ذمہ داری ہیکہ اس بات کا مظاہرہ کرے کہ وہ پٹھان کوٹ حملہ انکوائری میںکتنا سنجیدہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ دنیا کو پاکستان میں دہشت گردی کے بارے میںسخت تشویش ہے۔ ہندوستان کے موقف کو تسلیم کیا گیا ہے اور اس کی ستائش ہوئی ہے۔ وزیراعظم پاکستان نے اس حملہ کے سلسلہ میں کارروائی کرنے کا تیقن دیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT