Thursday , November 23 2017
Home / اضلاع کی خبریں / پیداپلی کو ضلع بنانے کی تجویز

پیداپلی کو ضلع بنانے کی تجویز

جائزہ لینے کیلئے ریاستی حکومت کے احکامات
پیداپلی۔ 18 اگست (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) پیداپلی کو اچانک ہی ضلع بنانے کی تجویز پیش کی گئی ہے جس کا کہ اب تک کہیں ذکر نہیں کیا گیا۔ اب ریاستی حکومت نے پیداپلی کو ضلع بنائے جانے جائزہ لینے کا حکم دیا ہے حالانکہ اب تک صرف سرسلہ، جگتیال کے ہی نام سنائی دے رہے تھے۔ جگتیال کو ضلع بنانے میں صرف منڈلس کو شامل کئے جانے پر کچھ اعتراضات ہوئے۔ ضلع بنانے کے بارے میں کسی نے مخالفت نہیں کی۔ جبکہ سرسلہ ضلع بنائے جانے کے اعلان کے ساتھ ہی منڈلس کے عوام اور مختلف سنگھموں کی جانب سے اعتراضات کئے جارہے تھے۔ حیدرآباد میں منعقدہ حالیہ اجلاس میں بھی زیادہ ارکان نے سرسلہ کو ضلع بنانے کی مخالفت کی تھی۔ اس کی وجہ سے سرسلہ کو خارج کردیا گیا۔ اس وقت رکن اسمبلی رام گنڈم ایس ستیہ نارائنا نے رام گنڈم کو ضلع بنانے تجویز پیش کی تھی۔ اس پر ایم پی بالکشن چیف وہپ کے ایشور، جیون ریڈی اور پی سدھاکر ریڈی نے رسمی تائید کی۔ اس پر غور کرنے وزراء کی سب کمیٹی نے اشارہ دیا تھا کہ ضلع مستقر سے کوئی بھی مقام گاؤں منڈل 50 کیلومیٹر کے فاصلے پر نہ ہونا چاہئے، ایک شرط رکھی۔ اس طرح ضلع کریم نگر سے رام گنڈم منتھنی متارم کا فاصلہ زیادہ ہے۔ اس طرح آبادی کے حساب سے بھی کریم نگر ضلع کی آبادی زیادہ ہے۔ صرف کریم نگر رام گنڈم کی آبادی ہی چھ لاکھ سے زیادہ ہے۔ مزید 25 منڈل کی آبادی جوڑی جائے تو 16 لاکھ ہوجائے گی۔ ایسے میں ضلع بنائے جانے کے لئے کے سی آر نے پداپلی پر غور کرنے کو کہا ہے۔ رام گنڈم صنعتی علاقہ ہے، مزید ترقی پاجائے گا۔ منتھنی اور رام گنڈم سے قریب درمیان پیداپلی ضلع ہی مناسب سہولت بخش رہے گا۔ ٹرین کی سہولت بھی ہے۔ اب اس پر غور کیا جارہا ہے۔ پیداپلی ضلع میں سلطان آباد، اودیار کالواسری رام پور، جولاپلی، ایلیگنڈھ رام گنڈم منتھنی کمان پور متارم کے ساتھ پداپلی رام گنڈم اربن کے ساتھ ایک اور منڈل کمان پور شامل کرلیا جائے تو 13 منڈل کے ساتھ 9 لاکھ آبادی والا پیداپلی ضلع ہوگا، کہا جارہا ہے۔ اب کریم نگر میں چپہ ڈنڈی بوئن پلی، گنگا دھرا ، رامڑگ مانا، کنڈور، تماپور، شنکر پٹنم، ایجنی، چیکور مامڑی، سیداپور ، وینوکا سرسلہ مستاآباد، ایلاریڈی پیٹھ، گمبھی راؤ پیٹ، ویملواڑۃ، چندورتی باقی رہ جائیں گے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT