Friday , November 16 2018
Home / سیاسیات / پی این بی اسکام کی تحقیقات کا معاملہ سپریم کورٹ میں تصفیہ طلب

پی این بی اسکام کی تحقیقات کا معاملہ سپریم کورٹ میں تصفیہ طلب

نئی دہلی، 9 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) سپریم کورٹ نے آج کہا کہ وہ طے کرے گا کہ آیا زائد از 11 ہزار کروڑ روپئے والے پنجاب نیشنل بینک فراڈ کیس کی عدالت کی نگرانی میں تحقیقات کرانے کے لیے داخل کردہ پی آئی ایل قابل قبول ہے یا نہیں۔ چیف جسٹس دیپک مشرا اور جسٹس اے ایم کھانویلکر اور جسٹس ڈی وائی چندرچور کی بنچ کو مرکز نے بتایا کہ مختلف ایجنسیاں جیسے سنٹر بیورو آف انویسٹگیشن (سی بی آئی)، انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ (ای ڈی)، انکم ٹیکس ڈپارٹمنٹ اور سنگین نوعیت کے دھوکہ دہی کی تحقیقات کرنے والا ادارہ (ایس ایف آئی او) پی این بی اسکام کی آزادانہ طور پر جانچ کررہے ہیں۔ اٹارنی جنرل کے کے وینوگوپال نے اس پی آئی ایل کو خارج کردینے پر زور دیا، جس کے ذریعہ استدعا کی گئی ہے کہ اس اسکام کی عدالت کی خصوصی نگرانی میں تحقیقات کرائی جائے۔ اٹارنی جنرل نے کہا کہ کئی ادارے پہلے ہی اس معاملہ کی تحقیقات کررہے ہیں۔ اس لیے کورٹ کی نگرانی میں علیحدہ انکوائری کی ضرورت نہیں۔ اٹارنی جنرل وکیل ونیت دھانڈا کی دائر کردہ عرضی کی مخالفت کررہے ہیں، جنہوں نے پی این بی کیس کی آزادانہ تحقیقات چاہتے ہوئے عدالت سے حکومت کو ایسی ہدایت دینے کی درخواست کی ہے کہ ڈائمنٹ مرچنٹ نیرب مودی کو وطن واپس لایا جائے۔

TOPPOPULARRECENT