Thursday , December 13 2018

پی لکشمیا سے فوری استعفیٰ کا مطالبہ

حیدرآباد /23 ستمبر (سیاست نیوز) کانگریس کے سینئر قائد و سابق ریاستی وزیر ڈاکٹر شنکر راؤ نے صدر تلنگانہ پردیش کانگریس پنالہ لکشمیا سے فوری مستعفی ہونے کا مطالبہ کیا۔ واضح رہے کہ ڈاکٹر شنکر راؤ کو پارٹی نے 2014ء کے عام انتخابات میں ٹکٹ سے محروم کردیا تھا، جس کی وجہ سے وہ تلنگانہ پردیش کانگریس پر مسلسل اپنی ناراضگی کا اظہار کرتے ہوئے تنقید کا نشانہ بنا رہے ہیں۔ انھوں نے صدر کانگریس سونیا گاندھی کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے پنالہ لکشمیا کو صدارت سے ہٹانے اور کسی اہل قائد کو صدر بناکر کانگریس کو مستحکم کرنے کا مطالبہ کیا۔ انھوں نے سی ایل پی آفس اسمبلی میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میدک لوک سبھا کے ضمنی انتخاب کے نتائج سے صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کی قائدانہ صلاحیت اُجاگر ہوچکی ہے اور انھوں نے شکست کی ذمہ داری بھی قبول کرلی ہے، لہذا انھیں فوراً عہدۂ صدارت سے مستعفی ہو جانا چاہئے۔ انھوں نے کہا کہ کانگریس کو تلنگانہ میں مستحکم کرنے کے لئے یہی ایک واحد راستہ ہے کہ قیادت میں تبدیلی لائی جائے، لہذا پنالہ لکشمیا یا تو خود مستعفی ہو جائیں یا پارٹی ہائی کمان ان کی جگہ کسی اہل قائد کو صدر بنائے۔ انھوں نے تلنگانہ کانگریس کی نوتشکیل شدہ رابطہ کمیٹی پر اپنا ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ رابطہ کمیٹی میں جن قائدین کو شامل کیا گیا ہے، ان کے درمیان تال میل کا فقدان ہے۔ عام انتخابات میں اہم ذمہ داریاں ان ہی قائدین کو سونپی گئی تھی، لیکن کانگریس کی جانب سے علحدہ ریاست تشکیل دینے کے باوجود نتائج پارٹی کے لئے مایوس کن ثابت ہوئے۔

TOPPOPULARRECENT