Thursday , November 23 2017
Home / شہر کی خبریں / چارمینار داخلہ ٹکٹ کے لیے کارڈ کے ذریعہ ادائیگی

چارمینار داخلہ ٹکٹ کے لیے کارڈ کے ذریعہ ادائیگی

تاریخی مقامات ڈیجیٹل انڈیا کو فروغ دینے محکمہ آثار قدیمہ کا فیصلہ
حیدرآباد۔10جنوری(سیاست نیوز) تاریخی چارمینار کی سیاحت اور داخلہ ٹکٹ خریدنے والوں کو کارڈ کے ذریعہ ادائیگی کی سہولت حاصل ہوگی۔ چارمینار کے علاوہ آرکیا لوجیکل سروے آف انڈیا کے زیر انتظام تاریخی مقامات پر بھی کارڈ سوائپنگ مشین کی فراہمی عمل میں لاتے ہوئے ان مقامات کو ڈیجیٹل ادائیگی کے مربوط کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے اور بہت جلد اس عمل کی تکمیل ہو گی۔ شہر حیدرآباد میں آرکیا لوجیکل سروے آف انڈیا کے تحت چارمینار ‘ قلعہ گولکنڈہ اور گنبدان قطب شاہی موجود ہیں۔ آرکیا لوجیکل سروے آف انڈیا کے ذرائع کے بموجب ان مقامات کی سیاحت کیلئے پہنچنے والوں کے لئے ڈیجیٹل نظام ادائیگی کو یقینی بناتے ہوئے الکٹرانک ادائیگی نظام کو فروغ دیا جا سکتا ہے۔بتایا جاتا ہے کہ سال 2016کے دوران تاریخی چارمینار کا مشاہدہ کرنے والوں کی تعداد 9لاکھ 83ہزار 500تک پہنچ چکی ہے اور جاریہ سال اس تعداد میں مزید اضافہ کی توقع کی جارہی ہے کیونکہ سیاحت کی غرض سے چارمینار پہنچنے والوں کی تعداد میں ہر سال اضافہ ریکارڈ کیا جا رہا ہے۔تاریخی چارمینا ر کے مشاہدہ کیلئے پہنچنے والے سیاحوں کو تاحال الکٹرانک ادائیگی کے ذریعہ ٹکٹ خریدنے کی سہولت دستیاب نہیں تھی لیکن اب آرکیالوجیکل سروے آف انڈیا نے فیصلہ کیا ہے کہ سیاحوں کو کارڈ کے ذریعہ ٹکٹ کی خریدی کی سہولت فراہم کروائی جائے۔عہدیداروں کے بموجب چارمینار کو بغرض سیاحت پہنچنے والوں میں 60فیصد اندرون ملک سیاح ہیں جبکہ بیرونی سیاحوں کی تعداد 40فیصد کے قریب پہنچ چکی ہے۔حیدرآباد میں ڈیجیٹل ادائیگی نظام اور رقمی لین دین سے پاک نظام کو فروغ دینے کے لئے کئے جا رہے متعدد اقدامات میں یہ ایک اہم پیشرفت تصور کی جا رہی ہے۔بتایا جاتا ہے کہ آرکیالوجیکل سروے آف انڈیا کے اس فیصلہ کے بعد ریاستی محکمہ آرکیالوجی و سیاحت کی جانب سے بھی ریاستی زیر انتظام تفریحی و سیاحتی مقامات پر کارڈ کے ذریعہ ادائیگی و ٹکٹ کی خریدی کے ۔طام کو متعارف کروایا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT