Friday , June 22 2018
Home / ہندوستان / چارہ اسکام میں لالو کے خلاف مقدمہ سی بی آئی ڈائرکٹر دستبرداری کے خواہاں

چارہ اسکام میں لالو کے خلاف مقدمہ سی بی آئی ڈائرکٹر دستبرداری کے خواہاں

نئی دہلی 13 مارچ ( سیاست ڈاٹ کام ) ایک حیرت انگیز تبدیلی میں سی بی آئی ڈائرکٹر رنجیت سنہا نے لالو پرساد یادو کے خلاف چارہ اسکام میں تین زیر التوا مقدمات میں الزامات واپس لینے کی وکالت کی ہے ۔ چارہ اسکام کے ایک مقدمہ میں آر جے ڈی سربراہ کو سزا بھی ہوئی ہے ۔ سی بی آئی ڈائرکٹر نے ڈائرکٹر استغاثہ او پی ورما اور دوسرے سینئر عہدیداروں کے خلاف سی بی آئی پٹنہ برانچ کی رائے سے بھی اختلاف کیا ہے اور کہا کہ الزامات سے سبکدوشی اختیار کی جانی چاہئے ۔ اب یہ مسئلہ سالیسیٹر جنرل سے رجوع کیا گیا ہے جس میں خاص طور پر درخواست کی گئی ہے کہ اس کا جائزہ لیا جائے تاہم روایت یہ ہے کہ سی بی آئی ڈائرکٹر اور ڈائرکٹر استغاثہ کے مابین اختلاف رائے کے معاملات کا اٹارنی جنرل جائزہ لیتے ہیں۔

رنجیت سنہا نے کہا کہ اس کیس میں جو ثبوت اور جو ملزم افراد ہیں وہ سب یکساں ہیں اور الزامات بھی تقریبا یکساں نوعیت کے ہیں۔ مسٹر سنہا نے کہا کہ چونکہ ثبوت ایک طرح ہی کے ہیں اس لئے ان کے خیال میں کسی ایک ہی شخص پر ایک ہی جرم کے ارتکاب پر دوسرا مقدمہ نہیں چلایا جانا چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ وہ اس معاملہ میں پٹنہ زون کے سربراہ کے علاوہ ڈائرکٹر استغاثہ کی رائے سے اتفاق نہیں کرتے ۔ چونکہ اس معاملہ میں اختلاف رائے ہے اس لئے سالیسیٹر جنرل سے یہ معاملہ رجوع کیا گیاہے تاکہ وہ اس معاملہ میں اٹھائے گئے قانونی امور کا جائزہ لیں۔ سابق چیف منسٹر لالو پرساد یادو کو چارہ اسکام کے ایک مقدمہ میں پہلے ہی سزا بھی ہوچکی ہے ۔ تاہم اب سی بی آئی ڈائرکٹر چاہتے ہیں کہ دیگر تین مقدمات میں ان کے خلاف جو الزامات عائد کئے گئے ہیں ان سے دستبرداری اختیار کرلی جائے ۔

TOPPOPULARRECENT