Wednesday , December 13 2017
Home / شہر کی خبریں / چندرائن گٹہ میں موجود فلائی اوور میں مزید 500 میٹر تک توسیع کرنے کا فیصلہ

چندرائن گٹہ میں موجود فلائی اوور میں مزید 500 میٹر تک توسیع کرنے کا فیصلہ

گریٹر حیدرآباد حدود میں یہ کسی فلائی اوور میں پہلی مرتبہ توسیع ہوگی
حیدرآباد ۔ 30 ۔ اکٹوبر : ( رتنا چوٹرانی ) : پہلی مرتبہ ، چندرائن گٹہ میں واقع ایک موجودہ فلائی اوور کو مزید 500 میٹر تک وسعت دی جائے گی اور یہ توسیع موجودہ 150-140 میٹر سالڈ ریمپ کو منہدم کر کے یا موجودہ اپروچ کو اٹھانے کے دوران اسے ڈھانپتے ہوئے کی جائے گی ۔ یہ پہلی مرتبہ ہیکہ گریٹر حیدرآباد حدود میں ایک موجودہ فلائی اوور میں توسیع کی جارہی ہے ۔ جی ایچ ایم سی کے حدود میں 25 تا 30 فلائی اوورس ہیں جنہیں جی ایچ ایم سی اور حیدرآباد میٹرو پولیٹن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی ( ایچ ایم ڈی اے ) کی جانب سے تعمیر کیا گیا ہے ۔ ان تمام فلائی اوورس کا مینٹیننس اب کارپوریشن کے کنٹرول میں ہے ۔ اس جنکشن پر ہونے والے ٹریفک ہجوم کے مسئلہ کو حل کرنے کے لیے فورلین موجودہ گریڈ سپریٹر میں توسیع کرنا ضروری ہوگیا ہے ۔ اس پراجکٹ میں بارکس روڈ تا کندیکل گیٹ اور انر رنگ روڈ کو ڈیولپ کرنا شامل ہے ۔ موجودہ جنکشن سنگلائزڈ جنکشن ہونے کی وجہ سے موجودہ فلائی اوور پر ٹریفک ہجوم اور ٹریفک کے مسائل پیدا ہورہے ہیں ۔ اس جنکشن پر ٹریفک ہجوم کے مسئلہ کو حل کرنے کے سلسلہ میں گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن نے موجودہ گریڈ سپریٹر میں توسیع کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ فلائی اوور کی توسیع سے ٹریفک کے آمد و رفت میں آسانی ہوگی اور ٹریفک کا بہاؤ آسان ہوگا اور ٹریفک جام کا مسئلہ نہیں ہوگا ۔ جی ایچ ایم سی کی اسٹانڈنگ کمیٹی نے ، جس کا چند دن قبل اجلاس ہوا تھا ، اس تجویز کو منظوری دے دی ۔ اس فلائی اوور کی توسیع کے لیے تخمینہ اخراجات تقریبا 37 کروڑ روپئے ہوں گے اور اسے مالیاتی سال 2017-18 کے لیے اسٹریٹیجک روڈ ڈیولپمنٹ پروگرام (SRDP) کے مرحلہ دوم کے تحت شروع کیا جائے گا ۔ اسے جی ایچ ایم سی کے جنرل باڈی اجلاس میں رکھا جائے گا جو توقع ہے کہ عنقریب منعقد ہوگا ۔ جہاں اس کی منظوری پر اسے ایڈمنسٹریٹیو منظوری کے لیے ریاستی حکومت کے پاس داخل کیا جائے گا ۔۔

TOPPOPULARRECENT