چندرابابونائیڈو نے مسلمانوں کے ساتھ نماز عید ادا کی

ریاست کی ترقی اور عوام کی خوشحالی کے لئے اللہ تعالی سے دعا کی ‘ مسلم بھائیوں کو مبارکباد
وجئے واڑہ ۔ 17؍ جون (سیاست ڈاٹ کام) آندھراپردیش کے چیف منسٹر این چندرابابونائیڈو نے گذشتہ روز مسلم بھائیوں کے ساتھ نماز عیدالفطر ادا کی ۔ وجئے واڑہ کے میونسپل گراؤنڈ پر نماز عید کے موقع پر چندرابابونائیڈو بھی روایتی ٹوپی پہن کر نمازیوں کے ساتھ کھڑے ہوگئے ۔ نماز ادا کرنے کے بعد وہاں موجود عام مسلمانوں اور مختلف مسلم قائدین کو عید الفطر کی مبارکباد دی ۔ چندرابابونائیڈو نے اس موقع پر مسلمانوں سے اردو زبان میں مختصر خطاب کرتے ہوئے کہاکہ رمضان المبارک کے دوران مسلمان بنی نوع انسان کی فلاح و بہتری کے لئے مہینہ بھر روزے رہتے ہیں ۔ نائیڈو نے اس موقع پر اپنی ریاست کی ترقی اور عوام کی خوشحالی کے لئے اللہ تعالی سے دعا کی ۔ انہوں نے کہاکہ ریاست میں فرقہ وارانہ امن و ہم آہنگی کو تلگودیشم حکومت اولین ترجیح دے رہی ہے ۔ انہوں نے یاد لایا کہ تلگودیشم وہ جماعت ہے جس نے تین طلاق بل کی سب سے پہلے مخالفت کی تھی ۔ انہوں نے کہاکہ ریاست میں اقلیتوں کی فلاح و بہبود کے لئے ریاستی بجٹ میں 1,100 کروڑ روپئے مختص کئے گئے ۔ چندرابابونائیڈو نے دعویٰ کیاکہ آندھراپردیش میں ملک کی واحد ریاست جہاں مساجد کے ائمہ و موذنین کو ماہانہ اعزازیہ ادا کیا جاتا ہے ۔ انہوںنے کہاکہ اقلیتوں کے لئے ریاست میں بہت جلد 25 اقامتی اسکولس کھولے جائیں گے ۔

TOPPOPULARRECENT