Wednesday , December 12 2018

چندرا بابو کی دھوکہ دہی کا عنقریب پردہ فاش کیا جائے گا

صدر وائی ایس آر کانگریس جگن موہن ریڈی کی چیف منسٹر آندھراپردیش پر سخت تنقید

صدر وائی ایس آر کانگریس جگن موہن ریڈی کی چیف منسٹر آندھراپردیش پر سخت تنقید

حیدرآباد ۔ 14 جون (سیاست نیوز) صدر وائی ایس آر کانگریس پارٹی مسٹر جگن موہن ریڈی نے چیف منسٹر آندھراپردیش مسٹر این چندرا بابو نائیڈو پر سخت تنقید کرتے ہوئے کہا کہ بہت جلد ان کی دھوکہ دہی کا پردہ فاش ہوجائے گا۔ وجئے واڑہ میں پارٹی کی شکست کا مقامی قائدین کے ساتھ تبادلہ خیال کرتے ہوئے جائزہ لینے کے بعد مسٹر جگن موہن ریڈی نے کہا کہ برقی اور ڈاکرا گروپس کے قرضہ جات کی معافی بہت بڑا کام ہے۔ ان پر بھی پارٹی کے قائدین نے دباؤ ڈالا تھا۔ تاہم انہوں نے اس کو قبول کرنے سے انکار کردیا اس کی وجہ بھی تھی۔ وہ اقتدار کی لالچ میں عوام کو جھوٹے وعدے کرکے انہیں دھوکہ دینا نہیں چاہتے تھے۔ ریاست کی تقسیم کے بعد آندھراپردیش مالی بحران کا شکار ہوچکا ہے۔ سرکاری خزانہ خالی ہے وہ سب کچھ جان بوجھ کر عوام کو دھوکہ دینا نہیں چاہتے تھے۔ صدر تلگودیشم کی حیثیت سے چندرا بابو نائیڈو نے وعدہ تو کردیا مگر بحیثیت چیف منسٹر آندھراپردیش اس کو پورا کرنا مشکل ہے۔ چیف منسٹر چندرا بابو نائیڈو نے اپنی حلف برداری تقریب میں پانچ فائیلوں پر دستخط کی ہے مگر قرضوں کی معافی کی فائل پر کوئی دستخط نہیں کی بلکہ قرضوں کی معافی کا جائزہ لینے کیلئے کمیٹی تشکیل دینے پر دستخط کرتے ہوئے عوام کو دھوکہ دیا ہے۔ چندرا بابو نائیڈو کی تمام دھوکہ دہی بہت جلد آشکار ہوگی۔ وائی ایس آر کانگریس پارٹی کو عوام کا فیصلہ قبول ہے۔ وائی ایس آر کانگریس پارٹی اپوزیشن کا تعمیری رول ادا کرے گی۔ تلگودیشم پارٹی نے اپنے انتخابی منشور میں جو بھی وعدے کئے ہیں اس کو عملی جامہ پہنانے کیلئے جمہوری انداز میں پارٹی حکومت پر دباؤ ڈالے گی۔ انہوں نے کہا کہ بہت جلد خریف سیزن کا آغاز ہونے والا ہے۔ کسانوں میں بے چینی پائی جاتی ہے اور حکومت کی جانب سے کسانوں کو راحت پیغام پہنچانے کا ابھی تک کوئی پیغام نہیں ملا۔ صدر وائی ایس آر کانگریس پارٹی نے کمیٹی کے بہانے سے مسلمانوں کو دھوکہ نہ دینے کا چیف منسٹر چندرا بابو نائیڈو کو مشورہ دیا۔

TOPPOPULARRECENT