Saturday , July 21 2018
Home / Top Stories / چندر شیکھر راؤ بی جے پی کے ایجنٹ ‘ تیسرے محاذ کاشوشہ سازش کا حصہ

چندر شیکھر راؤ بی جے پی کے ایجنٹ ‘ تیسرے محاذ کاشوشہ سازش کا حصہ

مسلم تحفظات کے معاملہ میں ٹی آر ایس حکومت سنجیدہ نہیں۔ پرجا چیتنیہ بس یاترا کا جلسہ ۔ اتم کمار ریڈی کا خطاب

حیدرآباد ۔14مئی (سیاست نیوز) صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی اُتم کمار ریڈی نے چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر کو بی جے پی کا ایجنٹ قرار دیا ۔ ریت مافیا پر ریاست کو یرغمال بنالینے کا الزام عائدکیا ‘ مسلم تحفظات میں توسیع کیلئے ٹی آر ایس حکومت سنجیدہ نہ ہونے کاد عوی کیا ۔ آج چنور میں منعقدہ پرجا چیتنیہ بس یاترا کے جلسہ عام سے خطاب میں ان خیالات کا اظہار کیا ۔ اس موقع پر قائد اپوزیشن تلنگانہ کونسل محمد علی شبیر ‘ ورکنگ پریسیڈنٹ ملو بٹی وکرامارک ‘ سابق وزراٹی جیون ریڈی ‘ سبیتا اندرا ریڈی ‘ ڈی ناگیندر و دوسرے موجود تھے ۔ اُتم کمار ریڈی نے وعدے کے مطابق مسلمانوں و قبائلی طبقات کے تحفظات میں توسیع میں ناکام ہوجانے کا ٹی آر ایس حکومت پر الزام عائد کیا اور کہا کہ چیف منسٹر کے سی آر بی جے پی اور وزیراعظم نریندر مودی کے ایجنٹ کی طرح کام کررہے ہیں ‘ جنہوں نے نوٹ بندی ‘ جی ایس ٹی اور صدر جمہوریہ و نائب صدر جمہوریہ کے انتخابات میں غیر مشروط بی جے پی کی تائید کی لیکن مسلم تحفظات اور قبائلی تحفظات کے توسیع میں ٹی آر ایس حکومت ناکام ہوگئی ہے ۔صدر تلنگانہ پردیش کانگریس نے کہا کہ فیڈرل فرنٹ کا شوشہ بھی بی جے پی کو سیاسی طور پر فائدہ پہنچانے کی سازش کا حصہ ہے ۔ کے سی آر تلنگانہ اور مرکزی حکومت کی ناکامیوں سے عوام کی توجہ ہٹانے کیلئے تھرڈ فرنٹ اور فیڈرل فرنٹ کو موضوع بحث بنانے کی کوشش کررہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ کے سی آر کا خاندان ریاست کے قدرتی وسائل ریت اور کوئلہ کو لوٹ رہا ہے ۔ کروڑہا روپئے کی بدعنوانیاں اور بے قاعدگیاں ہورہی ہیں ‘ سب کچھ چیف منسٹر تلنگانہ کی سرپرستی میں ہورہا ہے ۔ چنور میو کوئلہ کی بڑی کانیں ہیں ‘ صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی نے رعیتو بندھو اسکیم میں خولداروں کو نظرانداز کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے سرکاری خزانے سے دیئے جانے والی امداد میں خولداروں کو بھی حصہ دار بنانے کا مطالبہ کیا ۔ اُتم کمار ریڈی نے رعیتو بندھو اسکیم کی تشہیر پر سینکڑوں کروڑہا روپئے پانی کی طرح بہا دینے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ اس اسکیم کے تحت چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر سارے ملک میں اپنی تشہیر کررہے ہیں اور ملک کے عوام کو گمراہ کررہے ہیں ۔ کانگریس کی بس یاترا سے ٹی آر ایس حکومت کی اُلٹی گنتی شروع ہوچکی ہے ۔ ریاست میں جب بھی انتخابات منعقد ہوں گے کانگریس پارٹی آسانی سے 80 اسمبلی حلقوں پر کامیابی حاصل کرے گی ‘ حکومت تشکیل دیتے ہی ٹی آر ایس حکومت کے اسکامس و بدعنوانیوں کی تحقیقات کرانے کا اعلان کیا ۔ کانگریس کے کارکنوں کو ہراساں کرنے کا انتباہ دیتے ہوئے کہا کہ آئندہ کانگریس کی حکومت قائم ہوگی ۔ کانگریس قائدین اورکارکنوں کو ہراساں کرنے والوں کو ہرگز معاف نہیں کیا جائے گا ۔

TOPPOPULARRECENT