Monday , December 18 2017
Home / ہندوستان / چھتیس گڑھ میں 4 خطرناک نکسلائٹس گرفتاراور ایک کمانڈر ہلاک

چھتیس گڑھ میں 4 خطرناک نکسلائٹس گرفتاراور ایک کمانڈر ہلاک

ماویسٹوں کی جوابی کارروائی میں خانگی بس نذر آتش اور پولیس کی گاڑی پر فائرنگ
رائے پور ۔ 24 ۔ نومبر : ( سیاست ڈاٹ کام ) : ماویسٹ سرگرمیوں سے متاثرہ ضلع دانتے واڑہ میں پولیس نے آج ایک نکسلائٹ کمانڈر کو مار گرایا ۔ اس طرح علاقہ بستر میں جاریہ ماہ مختلف انکاونٹرس میں ہلاک نکسلائٹس کی تعداد 15 تک پہنچ گئی ۔ ضلع پولیس سپرنٹنڈنٹ کملو چن کشیپ نے بتایا کہ یہ انکاونٹر آج ایک بجے دن تونگ پال پولیس اسٹیشن کے حدود میں کیشٹاپور گاوں میں پیش آیا ۔ یہ اطلاع ملنے پر کہ ماویسٹ سیکشن کمانڈر پوریا ، کیشاپور کے ہفتہ وار بازار میں دیکھا گیا ۔ ڈسٹرکٹ ریزرو پولیس گروپ کی ایک ٹیم نے فراسپال میں تلاشی مہم شروع کردی اور کیشٹاپور میں نظر آنے پر پوریا کو پکڑنے کی کوشش کی گئی لیکن اچانک وہاں سے فائرنگ شروع کردی گئی ۔ اور پولیس نے جوابی فائرنگ کی ۔ علاقہ کا محاصرہ کرنے سے قبل ہی دیگر نکسلائٹس فرار ہوگئے تاہم جائے وقوع سے پودیا کی نعش ایک 303 رائفل ، 3 راونڈس اور 315 کی بور ریوالور کے ساتھ دستیاب ہوئی ۔

انہوں نے بتایا کہ نکسل لیڈر پودیا متعدد ہلاکت خیز حملوں کا منصوبہ ساز تھا ۔ واضح رہے کہ جنوبی بستر میں جاریہ ماہ 6 مختلف انکاونٹر واقعات میں 15 نکسلائٹس ہلاک کردئیے گئے ہیں ۔ دریں اثناء ضلع کنگیسر میں پولیس نے آج 4 نکسلائٹس بشمول ایک خاتون کو گرفتار کرلیا ۔ ضلع پولیس سپرنٹنڈنٹ جتندر سنگھ نے بتایا کہ بارڈر سیکوریٹی فورس اور ڈسٹرکٹ پولیس فورس کی مشترکہ ٹیم نے یہ گرفتاری عمل میں لائی ہے ۔ یہ نکسلائٹس گذشتہ ماہ چار گاؤں ۔ میٹابوڈکی معدنی علاقہ میں تقریبا 26 گاڑیوں کو آگ لگادینے کے واقعہ میں ملوث تھے ۔قبل ازیں چھتیس گڑھ کے ضلع سکما میں نکسلائٹس نے ایک خانگی ٹراویل بس کے مسافرین کو نیچے اتار دینے کے بعد گاڑی کو آگ لگادی ۔ اور اینٹی لینڈ مائن وہیکل پر بھی فائرنگ کردی جو کہ مسافرین کو بچانے کے لیے وہاں پہنچی تھی۔ پولیس نے بتایا کہ اس واقعہ میں کوئی زخمی نہیں ہوا ۔ یہ واقعہ کل شب تونگ پال پولیس اسٹیشن کے حدود میں تھکواڈر گاؤں کے قریب قومی شاہراہ نمبر 30 پر پیش آیا ۔ جہاں پر گذشتہ سال اپریل میں ماویسٹوں کے گھاٹ لگا کر کئے گئے حملہ میں 15 سیکوریٹی اہلکار اور ایک شہری ہلاک ہوگئے تھے ۔ یہ خانگی بس ضلع بستر کے ہیڈکوارٹر جگدل پور سے حیدرآباد جارہی تھی کہ نکسلائٹس نے حملہ کردیا ۔ پولیس نے بتایا کہ تقریبا 50 مسلح نکسلائٹس نے گھنے جنگل میں بس کو گھیر لیا ۔ اور مسافرین کو نیچے اتر جانے کے لیے کہا گیا جس کے بعد آگ لگا کر فرار ہوگئے ۔ اس علاقہ کی حساس نوعیت کے پیش نظر سیکوریٹی فورسیس سرنگوں سے محفوظ بکتر بند گاڑی میں وہاں پہنچی ۔ جس پر نکسلائٹس نے چند راونڈ فائر کیے ۔ تاہم جوابی کارروائی کرنے سے قبل انتہا پسند فرار ہوگئے ۔ بعد ازاں مسافرین کو دوسری بسوں میں روانہ کردیا گیا ۔ کل دوپہر میں بھی ضلع دانتے واڑہ میں نکسلائٹس نے آر ٹی سی بس کو نذر آتش کردیا تھا ۔۔

TOPPOPULARRECENT