Monday , November 20 2017
Home / اضلاع کی خبریں / چیتے کے چمڑے کی فروخت کرنے کا معمہ حل

چیتے کے چمڑے کی فروخت کرنے کا معمہ حل

ضلع نرمل کے 6افراد گرفتار، ایف آر او مظہر الدین کا انکشاف
کیرامیری۔/12جولائی، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) مقامی ایف آر او سید مظہر الدین احمد نے آج صحافیوں سے بات کرتے ہوئے اپنے بیان میں کہا کہ چیتے کو ہلاک کرکے اس کے چمڑے کو فروخت کرنے کا معمہ نرمل کے کڑم منڈل کے موضع اسلام پور کے 5افراد کی گرفتاری کے بعد حل ہوگیا ہے۔ تفصیلات کے بموجب 6 جولائی کو حیدرآباد میں دو افراد کی جانب سے چیتے کی کھال فروخت کرنے کی کوشش میں گرفتاری کے بعد ضلع کمرم بھیم آصف آباد کے کیرا میری اور جینود منڈل کے کچھ افراد کا نام منظر عام پر آنے کے بعد مقامی فاریسٹ رینج آفیسر سید مظہر الدین احمد اور ان کی ٹیم متحرک ہوتے ہوئے کیرا میری منڈل کے دو افراد اور جینور منڈل کے تین افراد کو گرفتار کیا تھا اس ضمن میں مقامی ایف آر او نے آج ایک پریس میٹ منعقد کرتے ہوئے اخباری نمائندوں کو تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ ضلع نرمل کے موضع اسلام پور کے پانچ افراد کو آج سے چھ ماہ قبل چیتے کو ہلاک کرنے کے جرم میں گرفتاری کے بعد چیتے کو ہلاک کرکے اس کے چمرے کو فروخت کرنے کا تمام معمہ حل ہوگیا ہے اس مقدمہ میں کل 17 افراد کی گرفتاری عمل میں آئی ہے اور اس تمام واقعہ کا حل نکالنے میں ضلع کمرم بھیم آصف آباد کے محکمہ جنگلات کے عہدیدار بالخصوص کیرامیری و جینور کے رینج آفیسر سید مظہر الدین احمد اور ان کی ٹیم کا کلیدی رول رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ اس مقدمہ میں ملوث تمام 17 افراد کو کورٹ میں حاضر کرکے پولیس کے حوالے کردیا گیا ہے۔ اس موقع پر سید مظہر الدین احمد نے کہا کہ جنگلی جانوروں کو ہلاک کرنا قانونی جرم ہے اور اس کے مرتکب کو ہر حال میں سزا دی جائے گی اور انہوں نے عوام سے اپیل کی کہ ایسے جرم کے ارتکاب سے پرہیز کرتے ہوئے محکمہ جنگلات کے عہدیداروں سے تعاون کریں۔

TOPPOPULARRECENT