Thursday , November 23 2017
Home / شہر کی خبریں / چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر اسکیمات کے عمل میں ملک بھر میں سرفہرست

چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر اسکیمات کے عمل میں ملک بھر میں سرفہرست

آندھرا پردیش کے چیف منسٹر چندرا بابو کو 13 واں مقام ، وزیر اعظم کے سروے میں انکشاف
حیدرآباد ۔ 13۔ جولائی (سیاست نیوز) چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے پھر ایک بار ملک بھر میں اپنی کارکردگی کا لوہا منوالیا ہے۔ نئی ریاست کے قیام کے بعد دو سال کے مختصر عرصہ میں چندر شیکھر راؤ نے عوامی ، فلاحی اور ترقیاتی اسکیمات کے آغاز کے ذریعہ ملک بھر میں جو مقبولیت حاصل کی تھی، اب وہ بہتر نظم و نسق اور مؤثر حکمرانی کے سبب ملک کے دیگر تمام چیف منسٹرس میں سرفہرست آئے ہیں۔ متحدہ آندھرپردیش میں 9 برس تک چیف منسٹر کے عہدہ پر فائز رہنے والے تجربہ کار سیاستداں اور آندھراپردیش کے موجودہ چیف منسٹر چندر ا بابو نائیڈوبہتر کارکردگی میں 13 ویں نمبر پر ہیں۔ وزیراعظم نریندر مودی کی جانب سے ملک بھر کے چیف منسٹرس کے بارے میں کئے گئے ایک سروے میں یہ نتائج سامنے آئے ہیں۔اس طرح تلنگانہ اور آندھراپردیش حکومتوں کی کارکردگی کا بھی اندازہ ہوتا ہے۔ علحدہ ریاست کیلئے 14 برس تک جمہوری انداز میں جدوجہد کے بعد کامیابی حاصل کرنے والے چندر شیکھر راؤ پھر ایک مرتبہ سارے ملک کی توجہ کا مرکز بن گئے اور مرکزی حکومت کو یہ تسلیم کرنا پڑا کہ بہتر حکمرانی اور عوام کی فلاح و بہبود میں ملک کی کئی بڑی اور ترقی یافتہ سمجھی جانے والی ریاستوں کو نئی اور چھوٹی ریاست تلنگانہ نے پیچھے چھوڑ دیا ہے۔ سنٹرل انٹلیجنس بیورو اور دیگر خانگی اداروں کے ذریعہ چلائے گئے اس سروے میں بی جے پی زیر اقتدار ریاستیں تلنگانہ سے پیچھے رہ گئیں۔ بتایا جاتا ہے کہ وزیراعظم نریندر مودی نے انٹلیجنس اور خانگی اداروں کے اشتراک سے ملک کے تمام چیف منسٹرس کی کارکردگی کا جائزہ لینے کیلئے خفیہ سروے کا اہتمام کیا تھا ۔ حالیہ عرصہ میں چیف منسٹر نے تمام ریاستوں کی کارکردگی کا جائزہ لیا جس کے بعد عوامی فلاحی پروگراموں پر عمل آوری کا پتہ چلانے کیلئے سروے منعقد کیا گیا تھا ۔ 29 ریاستوں اور دو مرکزی زیر انتظام علاقوں میں بہتر کارکردگی کے  ذریعہ کے سی آر نمبر ون چیف منسٹر اور سوپر چیف منسٹر کی طرح ابھرے۔ اس سروے میں مختلف اسکیمات پر عمل آوری کا بھی جائزہ لیا گیا اور عوامی خوشحالی کو بھی پیش نظر رکھا گیا۔ دیگر ریاستوں کے مقابلہ تلنگانہ کو کم مدت میں زائد اسکیمات کے آغاز کیا یہ ا علان حاصل ہے۔ مدھیہ پردیش میں بی جے پی کے چیف منسٹر شیوراج سنگھ چوہان سروے میں دوسرے نمبر رہے۔ حالانکہ ان کا شمار ملک کے مقبول چیف منسٹرس میں ہوتا ہے ۔

چھتیس گڑھ کے چیف منسٹر رمن سنگھ کو تیسرا مقام حاصل ہوا جبکہ گجرات کی چیف منسٹر آنندی بین ، چوتھے اور دہلی کے چیف منسٹر اروند کجریوال پانچویں نمبر پر رہے۔ بتایا جاتا ہے کہ وزیر اعظم نے ملک کے چیف منسٹرس کی کارکردگی کا جائزہ لینے کیلئے ہر چار ماہ میں ایک مرتبہ رپورٹ طلب کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ توقع ہے کہ اس سروے کے نتائج 16 جولائی کو جاری کئے جائیں گے۔ بی جے پی کی راجستھان چیف منسٹر وسندھرا راجے سندھیا ساتویں نمبر پر رہیں جبکہ جھارکھنڈ کے چیف منسٹر رگھوونش پرساد کو 14 واں مقام حاصل ہوا۔ اسی دوران سروے کے نتائج منظر عام پر آتے ہی کے سی آر کو مبارکبادیوں کا سلسلہ شروع ہوگیا۔ چیف منسٹر سے ملاقات کرتے ہوئے کئی وزراء اور قائدین نے ملک میں نمبر ون مقام حاصل ہونے پر مبارکباد پیش کی۔ ٹی آر ایس حلقوں میں اس نتیجہ پر خوشی کا ماحول دیکھا جارہا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT