Tuesday , September 25 2018
Home / اضلاع کی خبریں / چیف منسٹر مسلمانوں میں خوشحالی لانے کیلئے پُرعزم

چیف منسٹر مسلمانوں میں خوشحالی لانے کیلئے پُرعزم

بودھن ۔8اکٹوبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) رکن اسمبلی بودھن جناب محمد شکیل عامر نے یہاں بودھن شہر میں مسلمانوں کے ایک اجتماع کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ مسلمان حکومت سے بھیک نہیں بلکہ اپنے جائز حقوق چاہتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ دیگر ابنائے وطن کی طرح مسلم شہری بھی حکومت کو محاصل و دیگر ٹیکس ادا کرتے ہیں ۔ جناب شکیل نے ادعا کیا کہ موجودہ برسراقت

بودھن ۔8اکٹوبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) رکن اسمبلی بودھن جناب محمد شکیل عامر نے یہاں بودھن شہر میں مسلمانوں کے ایک اجتماع کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ مسلمان حکومت سے بھیک نہیں بلکہ اپنے جائز حقوق چاہتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ دیگر ابنائے وطن کی طرح مسلم شہری بھی حکومت کو محاصل و دیگر ٹیکس ادا کرتے ہیں ۔ جناب شکیل نے ادعا کیا کہ موجودہ برسراقتدار ٹی آر ایس حکومت مسلم اقلیت سے انصاف کرے گی ۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ کے چندر شیکھر راؤ مسلمانوں میں نظام دور حکومت کی طرح پھر سے خوشحالی لانے کے عزم رکھتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ریاست کے سالانہ بجٹ میں مسلمانوں کیلئے حکومت نے ایک ہزار کروڑ روپئے رقم مختص کیا ہے جس میں سے ضلع نظام اباد کیلئے ایک سو کروڑ روپئے ہوں گے اور مسلم آبادی کے لحاظ سے حلقہ اسمبلی بودھن کے مسلمانوں کے حصہ میں خطیر رقم آئے گی ۔ انہوں نے کہا کہ بے روزگاری برائیوں کی اصل جڑے ہے ۔ بیروزگار مسلم نوجوانوں کو روزگار فراہم کرنے حکومت آسان اقسان پر ادائیگی کا قرض فراہم کرے گی ۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ حکومت مسلمانوں کو زندگی کے تمام شعبہ حیات میں دیگر طبقات کے مساوی قسمت آزمائی کا موقع فراہم کرے گی ۔ جناب شکیل نے کہا کہ ریاست تلنگانہ میں مسلمانوں کی آبادی 18فیصد ہے اور شہر حیدرآباد کو چھوڑ کر انتخابی نتائج کا تجزیہ کیا جائے تو باقی 9اضلاع میں موجود 112اسمبلی کی نشستوں میں سے صرف حلقہ اسمبلی بودھن کی ایک نشست پر مسلم رکن اسمبلی وہ خود منتخب ہوئے ہیں جبکہ تین فیصد آبادی والے ایک مخصوص طبقہ کے 55ارکان اسمبلی منتخب ہوئے ۔ انہوں نے کہا کہ ریاست کے مسلمان بھی اسلامی تعلیمات پر عمل کرتے ہوئے ایوانوں میں مسلم نمائندوں کی تعداد میں اضافہ کرسکتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ منافق ہر دومیں پائے گئے ‘ آپسی اتحاد کے نام پر نااتفاقی پیدا کرنے والوں سے ہوشیار رہے ۔ انہںو نے برادران اسلام سے اپیل کی کہ مذہب اسلام ایک سیکولر مذہب ہے ۔ جناب شکیل عامر نے کہا کہ ہمیں دستور ہند کے دائرے میں رہ کر اپنے حقوق حاصل کرنے جدوجہد کرنا ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ آدمی اعلیٰ تعلیم و تربیت حاصل کر کے مکمل انسان بنتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ بچوں کو اچھی تعلیم فراہم کرتے ہوئے قوم کو صحیح منزل کی طرف لیجانا ہماری ذمہ داری ہے ۔

TOPPOPULARRECENT